The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم کے دلیرانہ فیصلے کے مثبت اثرات، پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں تیزی

کراچی : وزیراعظم عمران خان کے دلیرانہ فیصلے کے مثبت اثرات نمایاں ہونے لگے، پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں تیزی ریکارڈ کی گئی اور 100انڈیکس میں نو سو پوائنٹس کا اضافہ دیکھنے میں آیا، جس کے بعد سینتیس ہزارپوائنٹس کی سطح پر بحال ہوگئی۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے کابینہ میں تبدیلی کے فیصلے کے اثرات نظر آنے لگے، سرمایہ کاروں نے معاشی ٹیم کے نئے سربراہ پر اعتماد کا اظہار کیا، کاروبار کے دوران 100 انڈیکس میں 420 پوائنٹس کا اضافہ ہوا اور انڈیکس 37ہزار 200 پوائنٹس کی سطح عبور کرگیا۔

پہلے سیشن کا اختتام مثبت زون میں ہوا اور انڈیکس میں600 سے زائد پوائنٹس کی تیزی دیکھی گئی، جس کے بعد انڈیکس میں سینتیس ہزارپوائنٹس کی سطح بھی بحال ہوگئی۔

پہلے سیشن میں کاروبار کے دوران ایک سو نوے کمپنیوں کے حصص کی قیمت میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا اور کاروباری حجم بارہ کروڑ اکسٹھ لاکھ شیئرز رہا۔

گذشتہ روز اسد عمر کے وزارت خزانہ چھوڑنے کے بعد پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں مندی چھا گئی تھی اور کاروبار کے دوران 100 انڈیکس میں 145 پوائنٹس کی کمی دیکھی گئی، مندی کے بعد 100 انڈیکس 36 ہزار 600 پوائنٹس کی سطح سے نیچے آگیا تھا، تاہم اختتام انسٹھ پوائنٹس اضافے کے ساتھ ہوا تھا۔

مزید پڑھیں : اسد عمر کے استعفے کے بعد اسٹاک مارکیٹ میں مندی

جس کے بعد  اسد عمر کی جگہ ڈاکٹر حفیظ شیخ مشیر خزانہ بنا دیا گیا  تھا۔

خیال رہے کہ رواں ہفتے کے آغاز پر اسٹاک مارکیٹ میں تیزی دیکھی گئی تھی، منگل کے روز 100 انڈیکس کی 37 ہزار 400 کی نفسیاتی حد بحال ہوگئی تھی، تیزی کے نتیجے میں سرمایہ کاری مالیت میں 20 ارب 20 کروڑ روپے سے زائد کا اضافہ ہوا اور کاروباری حجم 9.16 فیصد کم ہوگیا، جبکہ 56.72 فیصد حصص کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا تھا۔

دوران ٹریڈنگ 100 انڈیکس 37 ہزار 697 پوائنٹس کی بلند سطح پر بھی دیکھا گیا تھا۔

رواں ہفتے کے آغاز پر سرمایہ کاری مالیت میں 20 ارب 20 کروڑ 60 لاکھ 80 ہزار 556 روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا تھا، جس کے نتیجے میں سرمایہ کاری کی مجموعی مالیت بڑھ کر 76 کھرب 61 ارب 91 کروڑ 40 لاکھ 33 ہزار 206 روپے ہوگئی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں