The news is by your side.

تحریک انصاف کا لاہور ہائی کورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کرنے کا اعلان

اسلام آباد : تحریک انصاف نے لاہور ہائی کورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کرنے کا اعلان کردیا، پی ٹی آئی رہنماؤں نے کہا کہ فیصلے میں کئی خامیاں ہیں ، پنجاب میں وزیر اعلیٰ کا الیکشن غیر قانونی،غیر آئینی ہے۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے رہنما فواد چوہدری نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ‌ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کہا کہ ہاائیکورٹ کے فیصلے نے پنجاب میں سیاسی بحران میں مزید اضافہ کر دیا ہے، حمزہ کی حکومت برقرار نہیں رہی ، جو حل دیا گیا ہے اس کے نتیجے میں بحران ختم نہیں ہو گا.

فیصلے میں کئی خامیاں ہیں لیگل کمیٹی کی میٹنگ بلا لی ہے ، ہائی کورٹ کے فیصلے میں خامیوں کو لے کرسپریم کورٹ سے رجوع کریں گے.

اس حوالے سے تحریک انصاف کے رہنما ڈاکٹر شہباز گل نے اپنے ٹوئٹ میں لکھا کہ اس فیصلے میں قانونی ابہام ہے، ایک طرف حکم کہ یہ الیکشن درست نہیں تھا اور اسے کالعدم قرار دے دیا، غلط الیکشن کے نتیجے میں بننے والے وزیراعلیٰ حمزہ کو کام جاری رکھنے کا کہا جا رہا ہے، اس فیصلے کے بعد اور خرابی ہوگی، غلط اور غلط ہوگا، نیا جنرل الیکشن ایک ہی حل ہے۔

سینیٹر فیصل جاوید نے اپنے ٹوئٹر ہیغام میں کہا کہ اسوقت پنجاب اور وفاق میں آئینی بحران ہے، پنجاب میں وزیر اعلیٰ کا الیکشن غیر قانونی،غیر آئینی ہے، آئین کونظرانداز کیا گیابعد میں عدالت نے بھی حکم دیا منحرف ووٹ شمار نہیں ہوں گے ، وفاق میں کوئی آئینی ترمیم کیلئےہاؤس پورا نہیں، آج الیکشن کالعدم قرار دیا گیا،واحد حل عام انتخابات ہیں۔

اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے لاہور ہائی کورٹ کے فیصلے کے حوالے سے کہا کہ اس فیصلے کو کل صبح چیلنج کر رہے ہیں، ہم سمجھتے ہیں کہ نئے الیکشن ہونے چاہئیے تھے، 5ووٹ ڈالنے کا حق دیا جائے تب برابری پر الیکشن ہوگا، کافی اراکین حج کرنے پرگئے ہیں ان کا انتظار کرنا چاہیے تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں