The news is by your side.

پی ٹی آئی ممنوعہ فنڈنگ کیس میں غیر ملکی قرار دیا گیا ایک اور پاکستانی سامنےآگیا

مردان : پی ٹی آئی ممنوعہ فنڈنگ کیس میں غیر ملکی قرار دیا گیا ایک اور پاکستانی سامنے آگیا، خادم نبی کا کہنا ہے کہ پاکستانی شہری ہوں، تصدیق کئے بغیر میرے عطیے کو فارن فنڈنگ قرار دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن کی جانب سے پی ٹی آئی ممنوعہ فنڈنگ کیس میں غیر ملکی قرار دیا گیا ایک اور پاکستانی سامنے آگیا۔

خادم نبی نے مردان میں گفتگو کرتے ہوئے کہا پاکستانی شہری ہوں، میری کمپنی نیکسٹ پوائنٹ شارجہ میں میرے نام رجسٹرڈ ہے، پی ٹی آئی کو فنڈنگ ذاتی اکاؤنٹ سے کی۔

خادم نبی کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن نے تصدیق کئے بغیر میرےعطیے کو فارن فنڈنگ قرار دیا ہے۔

مزید پڑھیں : تحریک انصاف کو ڈونیشن دینے والی ایک اور اوورسیز پاکستانی کا الیکشن کمیشن کے نام پیغام

یاد رہے رواں ماہ کے آغاز میں تحریک انصاف کو ڈونیشن دینے والی اوورسیز پاکستانی مہوش علی نے الیکشن کمیشن کے نام ویڈیو پیغام میں کہا تھا کہ پاکستان کو چھوڑنے کا مطلب یہ نہیں کہ پاکستانی نہیں ہوں، پندرہ سال سے کینیڈا میں ہوں۔

مہوش علی کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن کو ایسے فیصلے دیتے ہوئے شرم آنی چاہیے۔

خیال رہے الیکشن کمیشن کے پی ٹی آئی فارن فنڈنگ کے فیصلے میں سنگین غلطیاں سامنے آئی تھیں ، الیکشن کمیشن نے فیصلے میں پاکستانی کمپنی کی فنڈنگ کو فارن فنڈنگ ظاہر کردیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں