The news is by your side.

Advertisement

کراچی میں شدید گرمی کی لہر، رینجرز نے ہیٹ اسٹروک کیمپس قائم کردئیے

کراچی: شہر قائد میں شدید گرمی کی لہر اور ہیٹ اسٹروک کے پیش نظر سندھ رینجرز کی جانب سے شہر کے مختلف مقامات پر ہیٹ اسٹروک کیمپس قائم کردئیے گئے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں درجہ حرارت 41 ڈگری سینٹی گریڈ تک پہنچ گیا، ہیٹ اسٹروک کے پیش نظر رینجرز کی جانب سے قائم کردہ ہیٹ اسٹروک کیمپس میں شہریوں کو ٹھنڈے پانی کی فراہمی کے ساتھ ہیٹ اسٹروک سے متاثرہ مریضوں کے لیے طبی امداد کی فراہمی کے انتظامات کیے گئے ہیں۔

ترجمان رینجرز کے مطابق کالا پل، جنگل شاہ کالج ماڑی پور روڈ، پاکستان چوک ڈاکٹر ضیاء الدین روڈ، مین ماڑی پور روڈ اور گلبائی چوک سمیت دیگر مقامات پر ہیٹ اسٹروک کیمپ قائم کیے گئے ہیں۔

ترجمان رینجرز کا کہنا ہے کہ ہیٹ اسٹروک کیمپوں پر ماہر ڈاکٹروں کی ٹیم موجود ہے جہاں ہیٹ اسٹروک سے متاثرہ افراد کو فوری طبی امداد فراہم کی جارہی ہے جبکہ متاثرہ مریضوں کو دواؤں کی فراہمی بھی کی جارہی ہے۔

مزید پڑھیں: گرمی سے بجلی کی طلب میں ہونے والے اضافے کو پورا کرنے کی کوشش کر رہے ہیں: کے الیکٹرک

سندھ پولیس کی جانب سے بھی کراچی کے مختلف مقامات پر ہیٹ اسٹروک کیمپس لگائے گئے ہیں جہاں شہریوں کو ٹھنڈے پانی اور میٹھے مشروبات سمیت طبی امداد کی فراہمی کے انتظامات کیے گئے ہیں۔

دوسری جانب ڈائریکٹر میٹ سردار سرفراز نے کہا کہ کراچی میں مزید دو دن گرمی رہے گی، 16 جون سے کراچی کا موسم بہتر ہونا شروع ہوجائے گا، طوفان وایو سے بارش کا کوئی امکان نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ سمندری طوفان کے باعث کراچی میں ہوائیں بند ہے، طوفان کمزور ہونا شروع ہوگیا ہے، طوفان کی شدت کم ہونے پر سمندری ہوائیں بحال ہوں گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں