جمعہ, جون 21, 2024
اشتہار

حملے کے بعد رؤف حسن کا بیان سامنے آگیا

اشتہار

حیرت انگیز

پی ٹی آئی رہنما رؤف حسن کا اپنے اوپر ہونے والے حملے کے بعد بیان سامنے آگیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق پی ٹی آئی کے مرکزی سیکریٹری اطلاعات رؤف حسن کا کہنا ہے کہ میں پروگرام کے بعد واپس جارہا تھا چار لوگوں نے مجھ پر حملہ کیا۔

انہوں نے بتایا کہ میرے منہ پر بلیڈ جیسے تیز دھار آلے سے کٹ لگا ہے۔

- Advertisement -

دوسری جانب ذرائع کا بتانا ہے کہ رؤف حسن کا اسپتال میں طبی معائنہ جاری ہے، وہ شعبہ ایمرجنسی کے مائنر او ٹی میں موجود ہیں۔

ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ رؤف حسن کو چہرے کی دائیں جانب گال پر زخم آئے ہیں۔

ذرائع کا بتانا ہے کہ رؤف حسن کو تھوڑی دیر میں اسپتال سے ڈسچارج کیے جانے کا امکان ہے۔

واضح رہے کہ رؤف حسن پر حملےکی سی سی ٹی وی فوٹیج اےآروائی نیوز نےحاصل کر لی ہے۔ رؤف حسن پر حملے میں ’’بلیڈ‘‘ کا استعال کیا گیا اور چہرے پر زخم آئے۔

اسلام آباد پولیس کا کہنا ہے کہ رؤف حسن کو نجی ٹی وی چینل کے دفتر کے باہر بلیڈ مارا گیا ہے عینی شاہدین کے مطابق رؤف حسن کو خواجہ سراؤں نے چہرے پر بلیڈ مارا، پولیس موقع پر موجود ہے شواہد جمع کیے جا رہے ہیں جن خواجہ سراؤں نے  یہ حملہ کیا ہے ان کے خلاف کارروائی کی جائےگی۔

Comments

اہم ترین

مزید خبریں