The news is by your side.

Advertisement

پی ایس پی جانے والے رہنماؤں کی ایم کیو ایم میں واپسی

کراچی کی سیاست میں بڑی ہلچل ہوئی ہے اور متحدہ قومی موومنٹ پاکستان نے پاک سرزمین پارٹی کی تین وکٹیں اڑا دی ہیں۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق صوبہ سندھ کے دارالخلافہ اور ملکی سیاست میں ہمیشہ اہم کردار ادا کرنے والے شہر کراچی کی سیاست میں بڑی ہلچل ہوئی ہے اور متحدہ قومی موومنٹ پاکستان نے پاک سرزمین پارٹی کی تین اہم وکٹیں اڑا دی ہیں۔

ذرائع نے بتایا ہے کہ متحدہ قومی موومنٹ پاکستان سے پاک سرزمین پارٹی میں جانے والے تین اہم رہنماؤں سابق صوبائی وزیر ڈاکٹر صغیر احمد، سابق ایم پی اے وسیم آفتاب اور سلیم تاجک نے دوبارہ اپنی آبائی پارٹی ایم کیو ایم میں شمولیت کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ مذکورہ تینوں رہنماؤں نے 2015 میں پاک سرزمین پارٹی میں شمولیت اختیار کی تھی لیکن 2018 کے عام انتخابات میں بدترین شکست اور مشاورت میں شامل نہ کیے جانے پر پی ایس پی سے الگ ہوگئے تھے اور خاموش وقت گزار رہے تھے۔

واضح رہے کہ ڈاکٹر صغیر احمد ایم کیو ایم کے سابق صوبائی وزیر وسیم آفتاب سابق رکن صوبائی اسمبلی جبکہ سلیم تاجک بھی ایم کیو ایم میں اہم تنظیمی ذمے داریاں سر انجام دیتے رہے ہیں۔

یاد رہے کہ اس سے قبل رواں سال کے آغاز میں ایم کیو ایم پاکستان اور ایم کیو ایم بحالی کمیٹی کے بھی ایک ہونے کی خبر آئی تھی۔

متحدہ کنوینر خالد مقبول صدیقی کی جانب سے فاروق ستار کو دوبارہ ایم کیو ایم میں‌ شمولیت کی دعوت کا فاروق ستار نے بھی مثبت جواب دے دیا۔

یہ بھی پڑھیں: شہری سیاست میں اہم پیشرفت، متحدہ کے دونوں دھڑے ایک ہونے کو تیار

سابق وفاقی وزیر ڈاکٹر فاروق ستار نے اپنی پریس کانفرنس میں کہا تھا کہ خالد مقبول کے ساتھ کام کرنے کو تیار ہوں فیصلے کی گھڑی ہے ہمیں مخالفین کا مقابلہ ایک ہوکر کرنا ہوگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں