The news is by your side.

Advertisement

افغانستان میں بڑھتی کشیدگی، حامد کرزئی نے بڑی پیش گوئی کردی

کابل: افغانستان کے سابق صدر حامد کرزئی نے پیش گوئی کی ہے کہ طالبان اور افغان حکومت کے درمیان جلد معنی خیز امن مذاکرات بحال ہونے کی امید ہے۔

تفصیلات کے مطابق اپنے تازہ بیان میں حامد کرزئی کا کہنا تھا کہ افغان حکومت اور طالبان کو مذاکرات کا موقع گنوانا نہیں چاہیے، افغان حکومت سے مطالبہ ہے امن کا موقع ضائع نہ کرے۔

انہوں نے کہا کہ افغان حکومت اقدام کرے اور امن مذاکرات بحال کرے، طالبان کو کہتا ہوں اضلاع پر قبضہ کرنے سےکچھ حاصل نہیں ہوگا۔

سابق افغان صدر کا کہنا ہے کہ ملک کے مستقبل کا فیصلہ کسی ایک کے ہاتھ میں نہیں ہے، افغانستان میں مسائل کا حل اتحاد اور امن میں ہے، ملک کے مستقبل کا فیصلہ ہر افغان کی خواہش کے مطابق ہونا چاہیے۔

امریکا کا افغان حکومت کے ساتھ شراکت برقرار رکھنے کا اعلان

دوسری جانب امریکی محکمہ دفاع پنٹاگون کے ترجمان جان کربی نے افغان حکومت کے ساتھ شراکت برقرار رکھنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا افغان فضائیہ کو بلیک ہاک ہیلی کاپٹرز،سوپراسٹرائیک ایئرکرافٹ خرید کر دے رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ افغانستان میں امریکی افواج کی کمانڈاب جنرل فرینک مکینزی کریں گے، جنرل ملر افغانستان سے واپس امریکا روانہ ہوچکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں