The news is by your side.

Advertisement

سعودی حکومت نے حج کے حوالے سے حتمی فیصلہ کرلیا

ریاض : سعودی وزارت حج وعمرہ نے امسال فریضہ حج کی ادائیگی اندرون ملک کے عازمین تک محدود کرنے کا حتمی فیصلہ کیا ہے۔

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق وزارت نے کہا ہے کہ سال رواں کے حج میں صرف 60 ہزار شہریوں اور مقیم غیر ملکیوں کو فریضے کی ادائیگی کی اجازت ہوگی۔

اس حوالے سے ذرائع کا کہنا ہے کہ دنیا بھر میں کورونا وبا کی صورتحال اور  وائرس کی نئی اقسام ظاہر ہونے کے باعث فریضے کی ادائیگی اندرون ملک کے عازمین تک محدود کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ گذشتہ روز سعودی وزیر حج و عمرہ کا وزیر مذہبی امور پیر نور الحق قادری سے ٹیلفونک رابطہ ہوا تھا، جس میں ‏حج 2021 کے آپریشن اور تیاریوں سے متعلق امور پر گفتگو ہوئی۔

ٹیلیفونک رابطے کے بعد وفاقی وزیر نے ویڈیو بیان جاری کرتے ہوئے واضح کیا تھا کہ عازمین کی ‏تعداد اور ایس او پیز ابھی طے ہونا باقی ہیں، سعودی حکومت حتمی فیصلے سے قبل پاکستان کو ‏اعتماد میں لے گی سعودی حکومت کی جانب سے حتمی اعلان کے بعد حج پالیسی کا اعلان کیا ‏جائے گا۔

سعودی سفارتخانہ نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ کتنے عازمین شریک ہوں گے،حج پالیسی کیا ‏ہوگی، فیصلہ ہونا ہے، حج سےمتعلق کوئی سرکاری فیصلہ نہیں ہوا صرف مختلف تجاویز پر غور جاری ‏ہے۔ تاہم اب فیصلہ کرلیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں