The news is by your side.

Advertisement

سعودی حکومت کو دھوکہ دینے والے غیر ملکی شخص کو عبرتناک سزا

ریاض :نے وزارت تجارت نے سعودی کے نام سے اپنا کاروبار کرنے والے بنگلہ دیشی شہری کی تشہیر کی ہے۔ اسے چار ماہ قید کی سزا کے بعد مملکت سے بے دخل کردیا جائے گا۔

سرکاری خبر رساں ایجنی ایس پی اے کے مطابق وزارت تجارت نے عرعر فوجداری عدالت سے بنگلہ دیشی اور مقامی شہری کے خلاف جاری عدالتی فیصلہ ذرائع ابلاغ میں شائع کرایا ہے۔

فیصلے کے مطابق مقامی شہری کو بھی چار ماہ قید کی سزا سنائی گئی ہے جو اپنے نام سے بنگلہ دیشی کو رفحا کمشنری میں کاروبار کروا رہا تھا۔

تجارتی ادارہ سیل کرنے، کاروبار ختم کرنے ، لائسنس منسوخ کرنے، سجل تجاری واپس لینے اور زکوۃ نیز ٹیکس وصول کرنے کے احکام بھی جاری کیے گئے ہیں۔

وزارت تجارت نے سعودیوں کے نام سے کاروبار کرنے والے غیرملکیوں اور اپنے نام سے غیرملکیوں کو کاروبار کرانے والے سعودیوں سے پرھ ہدایت کی ہے کہ وہ 23 اگست 2021 سے قبل اصلاح حال کی کارروائی کرلیں۔

سعودی حکومت کا کہنا ہے کہ مہلت کے دوران غیر قانونی کاروبار کو قانون کے دائرے میں لایا جاسکتا ہے۔ ایسا کرنے پر وہ غیر قانونی کاروبار کی پردہ پوشی پر مقرر سزاؤں سے محفوظ ہوجائیں گے۔

سعودی حکومت نے مہلت کے دوران اختیار دیا ہے کہ غیرملکی اپنا کاروبار قانونی بنانے کے لیے کسی بھی سعودی کو کاروبار میں شریک کرسکتا ہے یا اپنے نام سے کاروبار کرنے والا غیرملکی کو شریک تجارت بناسکتا ہے۔

یہ سہولت بھی ہے کہ سعودی شہری تجارتی ادارہ فروخت کردے یا اس سے دستبردار ہوجائے یا باہمی سمجھوتے کے ذریعے تجارتی ادارے کے مالکانہ حقوق غیرملکی کے نام سے درج کرادے۔

غیرملکی کو اختیار دیا گیا ہے کہ وہ منفرد اقامہ حاصل کرکے کاروبار کو قانونی بناسکتا ہے۔ یہ اختیار بھی ہے کہ وہ اپنا کاروبار جاری رکھنے کے لیے سرمایہ کاری لائسنس حاصل کرلے۔ غیرملکی کے پاس کاروبار سمیٹ کر فائنل ایگزٹ پر جانے کا آپشن بھی موجود ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں