The news is by your side.

Advertisement

اسٹیٹ بینک کی جانب سے اہم خبر، ڈیجیٹل بینکاری کے لیے لائسنس کا اجرا

کراچی: اسٹیٹ بینک آف پاکستان ڈیجیٹل بینکاری کے لیے لائسنس کا اجرا کرنے جا رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ بینک کی جانب سے ڈیجیٹل ریٹیل بینک اور ڈیجیٹل فُل بینک (ڈی ایف بی) کے لائسنس جاری کیے جائیں گے۔

اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ ڈی ایف بی ریٹیل صارفین ، کاروباری اور کارپوریٹ سیکٹر کے ساتھ کام کر سکتا ہے، ڈی ایف بی نیا اکاؤنٹ، ڈپازٹ، قرض سمیت بینکاری خدمات فراہم کرے گا۔

ایس بی پی کے مطابق ڈی آر بی اور ڈی ایف بی کے تحت اسلامی بینکاری کی خدمات بھی فراہم کی جا سکتی ہیں۔

ڈی آر بی کے قیام کی کم از کم سرمائے کی شرط 1.5 ارب روپے رکھی گئی ہے، یہ سرمایہ تین سالوں میں 4 ارب روپے کرنا ہوگا، ڈیجیٹل بینک کو 2 سالوں کے بعد ڈیجیٹل فُل بینک بنانے کی اجازت ہوگی۔

ابتدا میں 5 ڈیجیٹل بینکوں کو لائسنس جاری ہوں گے، لائسنسنگ کے لیے درخواستیں رواں سال مارچ تک جمع کرائی جا سکیں گی۔

اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ نئے لائسنس کے ذریعے ڈیجیٹل بینکاری کے دور کا آغاز کر رہے ہیں، یہ مکمل ڈیجیٹل بینک متعارف کرانے کی جانب پہلا قدم ہے۔

بینک کے مطابق صارفین کو بذات خود کسی برانچ جانے کی ضرورت نہیں پڑے گی، ڈیجیٹلائزیشن کے حوالے سے دیگر اقدامات بھی کیے جا رہے ہیں، سستی، کم لاگت ڈیجیٹل مالی خدمات بڑھانا ایس بی پی کے فریم ورک کا بنیادی مقصد ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں