The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ سے آزادی، اسکاٹ لینڈ کا بڑا قدم

لندن: اسکاٹ لینڈ نے برطانیہ سے آزادی حاصل کرنے کے لیے بڑا قدم اٹھا لیا، اسکاٹش نیشنل پارٹی نے دوسرے ریفرنڈم کا اعلان کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق برطانیہ سے اسکاٹ لینڈ کی آزادی کے لیے ایس این پی نے یک طرفہ طور پر دوسرا ریفرنڈم کرانے کا اعلان کر دیا ہے۔

اسکاٹش نیشنل پارٹی نے ہفتے کے روز دوسرے ریفرنڈم کے لیے قانون سازی کرنے کی کوشش کرنے کے منصوبے کا اعلان کیا، حالاں کہ برطانیہ کی حکومت بدستور اس طرح کے ووٹ کی منظوری سے انکار کر رہی ہے۔

منصوبے کے مطابق مئی میں اسکاٹ لینڈ میں ہونے والے انتخابات میں اگر اسکاٹش نیشنل پارٹی جیتی تو قانونی ریفرنڈم کرایا جائے گا۔

اسکاٹش نیشنل پارٹی کا کہنا ہے کہ آج گیارہ نکاتی روڈ میپ پیش کیا جائے گا جب کہ برطانوی حکومت کی جانب سے ریفرنڈم روکنے کی کوشش کا مقابلہ کیا جائے گا۔

ایس این پی کے رہنما کیتھ براؤن کا کہنا تھا کہ ٹاسک فورس ریفرنڈم کے لیے حکمت عملی پر عمل پیرا ہوگی۔

برطانوی میڈیا کا کہنا ہے کہ ایس این پی لیڈرز پر ریفرنڈم کا راستہ اختیار کرنے کے لیے پلان بی پر عمل کے لیے دباؤ ہے، جب کہ برطانیہ کے وزیر اعظم بورس جانسن نے کہا ہے کہ وہ ایک اور آزادی ووٹ کی منظوری نہیں دیں گے اور رواں ماہ ایک انٹرویو میں کہا کہ ویسٹ منسٹر کو 2050 تک اس کی اجازت نہیں دینی چاہیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں