The news is by your side.

Advertisement

بھارت کے خلاف حکومت اور فوج تیار ہے، شاہ محمود قریشی

اسلام آباد: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ بھارت نے کشمیر میں سفاکانہ قوانین لاگو کردئیے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بچوں سمیت ہزاروں لوگوں کو جیلوں میں ڈالا گیا، خواتین کو بدترین تشدد کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں آزادی اظہار رائے کو یرغمال بنادیا گیا ہے، مقبوضہ وادی میں ہر دروازے کے باہر ایک بھارتی فوجی کھڑا ہے۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ یہ ہٹلر کی دور کی کہانی نہیں ہے بلکہ کشمیر میں بھارت کی درندگی ہے۔

انہوں نے کہا کہ دنیا دیکھ رہی ہے بھارت خطے کے امن کو داؤ پر لگا رہا ہے، بھارت دنیا کی توجہ ہٹانے کے لیے کچھ بھی کرسکتا ہے، بھارت کے خلاف حکومت اور فوج تیار ہے، عوام بھی تیار ہے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بھارت کی تاریخی حماقت نے قوم کو ایک بار پھر جگادیا ہے، بھارت میں جس طرح کی حکومت ہے اس سے مذاکرات نہیں ہوسکتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ 22 دن سے وادی میں غیرقانونی کرفیو ہے، کشمیر ایک بین الاقوامی حل طلب مسئلہ ہے جسے مودی تبدیل کرنا چاہتا ہے۔

مزید پڑھیں: بھارت کے پاس چھپانے کے لئے کچھ نہیں، اس کا نام نہاد چہرہ بےنقاب ہوگیا، شاہ محمود قریشی

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ ہزاروں افراد کو بغیر کسی مقدمے کے گرفتار کیا گیا، لاکھوں کشمیری سخت محاصرے میں اذیت ناک زندگی بسر کررہے ہیں۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ سرینگر سے بھارتی اپوزیشن رہنماؤں راہول گاندھی سمیت دیگر کو ڈی پورٹ کردیا گیا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر میں ذرائع ابلاغ پر مکمل پابندی ہے، بھارت کے پاس چھپانے کے لئے کچھ نہیں، اس کا نام نہاد چہرہ بےنقاب ہوگیا۔

ان کا کہنا تھا کہ دنیا نے دیکھا بھارت کشمیر میں کیا سلوک کررہا ہے، مقبوضہ وادی میں جمعہ کےروزلوگ حصارتوڑکرباہرنکلے، مقبوضہ وادی سے انتہائی تشویشناک اطلاعات موصول ہورہی ہیں، بھارت ایک چال چل رہاتھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں