The news is by your side.

Advertisement

مسئلہ کشمیر کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں سے ہی نکل سکتا ہے، شاہ محمود قریشی

اسلام آباد: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں سے ہی نکل سکتا ہے، سلامتی کونسل اجلاس سے تسلیم ہوگیا ہے مسئلہ کشمیر اندرونی نہیں عالمی مسئلہ ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے نیوز کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ سلامتی کونسل کو 13 اگست کو خط لکھا تھا، بھارت نے سلامتی کونسل اجلاس رکوانے کے لیے بہت کوشش کی، پوری قوم کو مبارک باد دیتا ہوں، آج کا دن تاریخی ہے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بھارت نے مختلف بہانوں سے مسئلہ کشمیر کو دنیا کی نظروں سے اوجھل رکھا، بھارت کا چہرہ پوری دنیا کے سامنے عیاں ہوگیا ہے، سلامتی کونسل کے ممبران بھارتی چال میں نہیں آئے۔

انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں 12ویں دن بھی کرفیو ہے، بھارت نے مقبوضہ کشمیر کو پوری دنیا سے الگ رکھا ہوا ہے، بھارت کی کوششوں کو مسترد کردیا گیا ہے۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان مذاکرات چاہتا تھا لیکن بھارت نے خود مذاکرات کو ٹھکرایا، مقبوضہ کشمیر میں زمینی حقائق اس وقت سامنے آئیں گے جب بھارت کرفیو ہٹائے گا۔

مزید پڑھیں: مقبوضہ کشمیر پر اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا اجلاس ختم

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بھارت نے کشمیریوں کی آواز کو دبایا ہوا ہے، وہ مزاحمت کررہے ہیں، بھارت کب تک کشمیریوں پر پابندی عائد کرتا رہے گا۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کا فیصلہ ہے کشمیریوں کے ساتھ آخری حد تک کھڑے ہونا ہے، پوری دنیا میں 15 اگست کو یوم سیاہ کے طور پر منایا گیا، عالمی میڈیا کا شکر گزار ہوں کہ بھارت کا اصل چہرہ بے نقاب کیا۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بھارت کے خلاف کشمیری ایک ہوگئے ہیں، بھارت مقبوضہ کشمیر سے پابندیاں اٹھائے اور عالمی مبصروں کو جانے دے، پتا چل جائے گا کہ کشمیری عوام کیا چاہتے ہیں۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ کوئی بھی کشمیری بھارتی موقف کی تائید نہیں کررہا ہے، کشمیریوں سے اخلاقی، سفارتی اور سیاسی حمایت جاری رہے گی۔

انہوں نے کہا کہ دفتر خارجہ میں کل اہم اجلاس بلایا ہے، اجلاس میں آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان کی قیادت شریک ہوگی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں