The news is by your side.

قتل کے بعد خرم نثار کے فرار سے متعلق اہم ملزم کا ویڈیو بیان سامنے آ گیا

کراچی: شہر قائد میں پولیس اہل کار کے قتل کے بعد خرم نثار کے فرار سے متعلق اہم ملزم کا ویڈیو بیان سامنے آ گیا۔

تفصیلات کے مطابق ڈیفنس فیز فائیو میں شاہین فورس کے اہلکار کے قتل کے بعد پولیس کے ہاتھوں زیر حراست شخص کا خصوصی ویڈیو بیان اے آر وائی نیوز نے حاصل کر لیا۔

شاہین فورس کے اہل کار عبدالرحمان کے قتل کے معاملے میں زیر حراست اہم ملزم عامر نے پولیس کو ایک ویڈیو بیان دیا ہے، جس میں انھوں نے قتل کے بعد خرم نثار کے فرار کا واقعہ بیان کیا ہے۔

ملزم عامر جو خرم نثار کا سالا ہے، نے بیان میں کہا کہ ’’میں ہوٹل پر بیٹھا ہوا تھا، خرم نثار نے مجھے ویٹر یا منیجر کے ذریعے باہر بلوایا، جب میں باہر نکلا تو خرم نے کہا کہ مجھے فوراً جانا ہے۔‘‘

ملزم عامر نے بیان میں انکشاف کیا کہ خرم نثار کی پہلے بھی کچھ دشمنی تھی، اس لیے میں سمجھا کہ پھر ایسا ہی کوئی واقعہ ہوا ہوگا۔ عامر نے بتایا کہ جب ان کا دوبارہ خرم سے رابطہ ہوا تو اس نے کہا میں پیٹرول پمپ پر ہوں۔

شاہین فورس اہلکار کا قتل : ملزم کی گرفتاری کے لیے انٹرپول سے مدد لینے کا فیصلہ

عامر نے کہا ’’خرم نثار نے مجھے کہا کہ میں اپنا ٹکٹ بک کروا رہا ہوں، اس دوران ہماری ڈرائیور کے ساتھ خرم کو ڈراپ کرنے کی بات ہوئی، لیکن گاڑی میں میری اس سے جب بات ہوئی تھی تو وہ مجھے مکمل یاد نہیں۔‘‘

عامر نے بیان میں مزید کہا کہ گاڑی میں خرم کا کہنا تھا کہ اسے ملک سے باہر جانا ہے، کیوں کہ اس کا کوئی پھڈا ہو گیا ہے۔ عامر نے یہ بھی بتایا کہ خرم نے پہلے سے ٹکٹ نہیں کروائی ہوئی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں