The news is by your side.

Advertisement

سندھ ہائی کورٹ کا غیر قانونی تعمیرات گرانے پر حکم امتناعی دینے سے انکار

کراچی: سندھ ہائی کورٹ نے شہر میں غیر قانونی تعمیرات گرانے سے متعلق اہم فیصلہ سنادیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں تجاوزات کے خلاف سپریم کورٹ کی جانب سے جاری حکم نامے کے بعد سندھ ہائی کورٹ نے غیر قانونی تعمیرات گرانے پر حکم امتناع دینے سےانکار کردیا ہے۔

سندھ ہائی کورٹ کی جانب سے یہ فیصلہ آج اس وقت سامنے آیا جب غیر قانون تعمیرات کو گرانے سے متعلق درخواست زیر سماعت تھی، جسٹس عمر سیال نے ریمارکس دئیے کہ سماعت شروع ہونے سے قبل سب سن لیں، جو کوئی تعمیرات گرانے پر حکم امتناع لینےآیا ہے،حکم امتناع نہیں ملےگا، سپریم کورٹ نےگزشتہ روز ہی تجاوزات گرانے کا حکم دیا ہے۔

گذشتہ روز چیف جسٹس کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے لارجر بینچ نے کڈنی ہل تجاوزات کیس میں کمشنر کراچی کو دو ہفتے میں غیر قانونی تعمیرات میں ختم کرنے کا حکم دیا اور اسی عرصے میں عمل درآمد رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:  سندھ کی سرکاری زمینوں پر قبضے فوری ختم کرانے کا حکم

اس کے علاوہ عدالت عظمیٰ نے صوبے کی تمام گرین بیلٹس بھی بحال کرانے کی ہدایات دی تھیں، حکمنامے میں سپریم کورٹ کی جانب سے کہا گیا تھا کہ تمام کھیل کے میدانوں و پارکس پر قائم تجاوزات کا خاتمہ کیا جائے اور محکمہ جنگلات کی زمینوں پر درخت لگائے جائیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں