The news is by your side.

Advertisement

پی ٹی آئی رہنما نے سابق ڈائریکٹر ایف آئی اے کی اچانک موت پر سوال اٹھادیا

پاکستان تحریک انصاف کی رہنما اور سابق وفاقی وزیر شیریں مزاری نے کہا ہے کہ ڈاکٹر رضوان کی موت سے کچھ سوالات ذہن میں آتے ہیں۔

پاکستان تحریک انصاف کی رہنما اور سابق وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق شیریں مزاری نے ایف آئی اے کے سابق ڈائریکٹر ڈاکٹر رضوان کی موت پر سوال اٹھا دیا ہے۔

شیریں مزاری نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ٹوئٹ میں کہا ہے کہ ڈاکٹر رضوان کی موت سے کچھ سوالات ذہن میں آتے ہیں۔

شیریں مزاری نے ٹوئٹ میں معنی خیز انداز اختیار کرتے ہوئے کہا کہ ٹیلی گرافک ٹرانسفر کیس میں کرائم منسٹر کو 14 مئی کی تاریخ دی گئی، ایک انتہائی افسوسناک اتفاق؟ یا دوسروں کے لیے خوفناک پیغام؟

 

انہوں نے ٹوئٹ میں یہ بھی لکھا ہے کہ ‘گہرے سائے پورے پاکستان میں پھیل رہے ہیں۔’

واضح رہے کہ ایف آئی اے کے سابق ڈائریکٹر ڈاکٹر رضوان آج صبح اچانک دل کا دورہ پڑنے کے باعث انتقال کرگئے۔

مزید پڑھیں: شہباز شریف کیخلاف منی لانڈرنگ کیس کی تحقیقات کرنے والے ایف آئی اے افسر انتقال کرگئے

شہباز حکومت نے آتے ہی ڈاکٹر رضوان کو ان کے عہدے سے ہٹا دیا تھا، ڈاکٹررضوان نے بطور ڈائریکٹرایف آئی اے شہبازشریف اوران کی فیملی کے منی لانڈرنگ کیسز میں تفتیش کی جبکہ شوگر اسکینڈل سمیت کئی کیسوں کی بھی تحقیقات کی تھیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں