The news is by your side.

Advertisement

میں اپنی وصیت لے آؤں گا، بلاول بھی لے کر آئیں، شہزاد اکبر کا چیلنج

اسلام آباد: مشیر داخلہ شہزاد اکبر کا کہنا ہے کہ میں اپنی وصیت لے آؤں گا، بلاول اپنی وصیت بھی لے آئیں جس کے ذریعے انہیں چیئرمین شپ ملی۔

اے آر وائی نیوز کے پروگرام ’آف دی ریکارڈ‘ میں گفتگو کرتے ہوئے مشیر داخلہ شہزاد اکبر نے بلاول کے الزامات پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ بلاول ملک میں رہے ہیں اور نہ قوانین کا پتا ہے، منتخب لوگوں کو اپنے اثاثے الیکشن کمیشن میں جمع کرانے ہوتے ہیں۔

شہزاد اکبر کے مطابق ان کی بیوی کےنام ایک جائیداد ہےجو انہیں والد کی طرف سے ملی، پارلیمنٹ میں بلاول کودعوت دوں گاآئیں اوربات کریں۔

انہوں نے کہا کہ میں اپنی 7نسلوں کی وضاحت دوں گااوربلاول بھی دیں، بلاول بھٹو بھی اپنی 7 نسلوں کاحساب کتاب دستاویزات کےساتھ دیں، نیب کی گرفتاری اورضمانت کےقانون پرکنفیوژن پھیلائی گئی ہے۔

شہزاد اکبر کا کہنا تھا کہ نیب کا قانون سپریم کورٹ کی اسکروٹنی سے گزر چکا ہے، نیب کی 90 دن کی حراست قوم کوگمراہ کرنےکیلئےکی جاتی ہے، نیب کےقانون میں کوئی خرابی نہیں ہے۔

مشیر داخلہ کا کہنا تھا کہ پریکٹس میں خرابی ہوسکتی ہےنیب قانون میں خرابی نہیں ہے، اپوزیشن نے جو ترامیم دیں وہ سب اپنی ذات کیلئےہیں، اپوزیشن کی ترامیم مان لی جائیں توزرداری کاکیس ختم ہوجائےگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں