19.8 C
Ashburn
بدھ, مئی 29, 2024
اشتہار

شیر افضل مروت نے اہم اعلان کر دیا

اشتہار

حیرت انگیز

راولپنڈی: رہنما پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) شیر افضل مروت نے پارٹی کی موجودہ قیادت کے ساتھ کام نہ کرنے کا اعلان کر دیا۔

اڈیالہ جیل کے باہر میڈیا سے گفتگو میں شیر افضل مروت نے کہا کہ شبلی فراز اور عمر ایوب نے آج بھی بانی پی ٹی آئی سے ملاقات ہونے نہیں دی، دونوں نے پارٹی سے کہا کہ اگر مجھے پبلک اکاؤنتس کمیٹی (پی اے سی) کی چیئرمین شپ دی گئی تو ہمیں قبول نہیں۔

شیر افضل مروت نے کہا کہ پی ٹی آئی کو میں نے اس وقت اٹھایا جب یہ سب لوگ چھپے ہوئے تھے اور پارٹی مردہ گھوڑا بن گئی تھی، خدمت کا صلہ یہ ملا کہ سوشل میڈیا ٹیم میرے خلاف مہم چلا رہی ہے۔

- Advertisement -

انہوں نے کہا کہ میرے بھائی کو ڈی نوٹیفائی کرنے کا مطلب تذلیل کرنا تھا، بطور احتجاج ان کے ساتھ کام کرنے سے انکار کرتا ہوں۔

گزشتہ روز ذرائع نے اے آر وائی نیوز کو بتایا تھا کہ بانی پی ٹی آئی شیر افضل مروت کے غیر ذمہ دارانہ رویے سے ناراض ہوگئے اور جیل میں ملاقات سے انکار کر دیا تھا جس کے بعد شیر افضل مروت بانی پی ٹی آئی سے بغیر ملاقات جیل سے واپس چلے گئے تھے۔

شیر افضل مروت کا سعودی عرب پر بیان اور خواجہ آصف سے ملاقات ناراضی کی وجہ بنی اور چیئرمین پی اے سی کیلیے ان کا نام بھی غیر ذمہ دارانہ رویے کی بنیاد پر واپس لیا گیا۔ پی ٹی آئی نے مشاورت کے بعد شیخ وقاص اکرم کو پی اے سی چیئرمین کیلیے نامزد کیا۔

اس سے قبل شیر افضل مروت نے چیئرمین پی اے سی کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ بانی پی ٹی آئی نے پی اے سی کے فیصلے کو سیاسی کمیٹی میں ریفر نہیں کیا، بانی پی ٹی آئی نے نہ ہی اب تک اپنا فیصلہ تبدیل کیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ کل بانی پی ٹی آئی سے ملاقات کروں گا اور اس فراڈ سے آگاہ کروں گا، نہ کمیٹی اجلاس کے بارے میں آگاہ کیا گیا نہ ہی ایجنڈے میں ایسی کوئی چیز تھی۔

Comments

اہم ترین

ویب ڈیسک
ویب ڈیسک
اے آر وائی نیوز کی ڈیجیٹل ڈیسک کی جانب سے شائع کی گئی خبریں

مزید خبریں