The news is by your side.

Advertisement

سندھ حکومت کا 7ارب کی گندم چوری کیس نیب کو بھیجنے کا فیصلہ

کراچی: سندھ حکومت نے 7ارب کی گندم چوری کیس قومی احتساب بیورو (نیب) کو بھیجنے کا فیصلہ کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں چیف سیکریٹری سندھ کی زیر صدارت اجلاس ہوا جس میں محکمہ خوراک،اینٹی کرپشن کے افسران نے شرکت کی۔اجلاس میں 7ارب کی گندم چوری کیس نیب کو بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا۔

وزیر خوراک سندھ کا کہنا ہے کہ نیب تاریخی چوری پر دودھ کا دودھ پانی کا پانی کرے۔

سندھ کی تاریخ میں سرکاری گندم کی سب سے بڑی چوری کا انکشاف

خیال رہے کہ گزشتہ ہفتے سندھ میں سرکاری گندم کی اربوں روپے کی چوری کا انکشاف سامنے آیا تھا، محکمہ خوراک سندھ نے سرکاری گوداموں سے ہونےوالے اس چوری کی تصدیق کی تھی۔

محکمہ خوراک سندھ کا کہنا تھا کہ سندھ کے سرکاری گوداموں سے ایک لاکھ اڑسٹھ ہزار میٹرک ٹن گندم چوری کی گئی، اس کی مالیت اوپن مارکیٹ میں 7 ارب روپے بتائی گئی۔

محکمہ خوراک کےمطابق اس کےعلاوہ ایک ارب پانچ کروڑ روپے کی گندم نوری آباد کے بعدکراچی آتے آتے غائب ہوگئی تھی، چیف سیکریٹری نے محکمہ خوراک کی گندم چوری کرنے والے ملازمین، ٹھیکے داروں اور ملوث ملز اونر کے خلاف تحقیقات کی سفارش پرانکوائری اینٹی کرپشن کو سونپ دی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں