The news is by your side.

Advertisement

سندھ حکومت نے بلدیاتی ایکٹ میں ترامیم سے متعلق اہم فیصلے کرلیے

کراچی : سندھ حکومت کی وزرا کمیٹی نے بلدیاتی ایکٹ میں ترامیم کے معاملے پر سپریم کورٹ کے فیصلے پر نظرثانی اپیل نہ کرنے کی سفارش کردی۔

تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت نے بلدیاتی ایکٹ میں ترامیم سے متعلق اہم فیصلے کرلیے اور وزرا کمیٹی نے سپریم کورٹ کے فیصلے پر نظرثانی اپیل نہ کرنے کی سفارش کردی۔

سندھ حکومت نے ماس ٹرانزٹ اتھارٹی،فوڈ اتھارٹی بلدیاتی اداروں کو منتقل نہ کرنے کا فیصلہ کرلیا جبکہ اداری تحفظ ماحولیات بھی صوبائی کنٹرول میں رہے گا۔

سپریم کورٹ کے فیصلے پر جائزے کیلئے بنائی گئی وزرا کمیٹی نے سفارشات تیار کرلیں، وزرا کمیٹی کی سفارشات وزیراعلی سندھ کابینہ کو پیش کی جائیں گی۔

یاد رہے سپریم کورٹ نے آئین کے آرٹیکل 140 اے کے تحت بلدیاتی اختیارات دینے کا حکم دیا تھا اور کہا سندھ حکومت با اختیار بلدیاتی ادارے قائم کرنے کی پابند ہے، ماسٹر پلان بنانااور اس پر عملدرآمد بلدیاتی حکومتوں کے اختیارات ہیں۔

سپریم کورٹ نے سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی ایکٹ، کے ڈی اے قوانین، ملیر ڈویلپمنٹ اتھارٹی اور حیدرآباد ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے قوانین بھی آئین کے مطابق تبدیل کرنے کا حکم دے دیا اور ساتھ ہی لیاری ڈویلپمنٹ اتھارٹی، واٹر بورڈ قانون، سہون ڈویلپمنٹ اتھارٹی اور لاڑکانہ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے قوانین میں بھی ضروری ترامیم کی ہدایت کر دی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں