The news is by your side.

Advertisement

سندھ پولیس کے معذور اہل کار کو پانچ سال بعد مصنوعی بازو لگا دیا گیا

کراچی: ٹریفک حادثے میں اپنے ایک بازو سے محروم ہونے والے پولیس اہل کار  کو مصنوعی بازو لگا دیا گیا.

تفصیلات کے مطابق ایس ایس پی ایسٹ کی کوشش سے سب انسپکٹر کو پانچ برس بعد اپنا کھویا ہوا بازو مل گیا.

سب انسپکٹر انور سولنگی 2014 میں اسٹیل ٹاؤن میں‌ ڈیوتی دیتے ہوئے ایک ٹریفک حادثے میں اپنے بازو سے محروم ہوگیا تھا. اس ضمن میں ایس ایس پی ایسٹ غلام اظفر مہیسر نے کلیدی کردار ادا کیا.

سب انسپکٹر انور سولنگی کو یہ مصنوعی بازو انسپکٹر جنرل سندھ پولیس سید کلیم امام کے ہدایت پر لگایا گیا.

غلام اظفر مہیسر / سید کلیم امام

اپنا کھویا ہوا بازو پانے کے بعد انور سولنگی نے مسرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ میں‌ آئی جی سندھ سید کلیم امام کا تہ دل سے شکر گزار ہوں. معذوری کی وجہ سے میں گزشتہ پانچ برس سے پریشانی کا شکار تھا.

یہ آپریشن ایس ایس پی ایسٹ غلام اظفر مہیسر کی سندھ پولیس میں لائی جانے والی اصلاحات کا حصہ ہے.

مزید پڑھیں: سندھ پولیس کے 163 اہل کاروں کے نام یو این امن مشن کے لیے فائنل

اے آر وائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے غلام اظفر مہیسر نے کہا کہ سندھ پولیس میں 35 اہل کاروں کو مختلف معذوریوں کا سامنا ہے، جو ڈیوٹی کے دوران پولیس مقابلوں اور بم دھماکوں میں معذور ہوئے.

انھوں نے مزید کہا کہ انسپکٹر جنرل سندھ ویلفیئر ڈیپارٹمنٹ مزید اصلاحات کے لیے پرامید ہے.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں