The news is by your side.

Advertisement

اسمارٹ کارڈ میں خواتین عازمین کی تصویر ضروری ہے یا نہیں؟ سعودی وزارت حج و عمرہ کی وضاحت

ریاض: اسمارٹ کارڈ میں خواتین عازمین کی تصویر ضروری ہے یا نہیں؟ وزارت حج و عمرہ کی جانب سے وضاحت جاری کر دی گئی۔

تفصیلات کے مطابق سعودی وزارت حج و عمرہ نے کہا ہے کہ اسمارٹ کارڈ میں خواتین عازمین کی تصویر ضروری نہیں ہے، خواتین عازمین کو شناخت کے لیے دستاویزات دکھانے ہوں گے۔

وزارت کے مطابق اسمارٹ کارڈ عازمین کی سہولت کے لیے تیار کیا گیا ہے، عازمین کو مشاعر مقدسہ میں دستاویزی ثبوت ساتھ رکھنے کی ضرورت نہیں ہوگی، وزارت نے مزید کہا کہ اسمارٹ کارڈ سے عازمین کو متعدد سہولتیں فراہم کی جائیں گی۔

گزشتہ روز بھی سعودی وزارت حج و عمرہ کی جانب سے اہم فیصلے میں کہا گیا تھا کہ محرم کے ساتھ حج درخواست دینے والی خاتون تنہا درخواست منسوخ نہیں کرا سکتی، بطور محرم حج درخواست دینے والے مرد بھی تنہا اسے منسوخ نہیں کرا سکتے۔

سعودی وزارت نے کہا تھا کہ ارادہ بدلنے کی صورت میں محرم، درخواست گزار دونوں کی درخواست منسوخ ہوگی، خاتون کا محرم شوہر، بھائی، بیٹا اور والد ہو سکتے ہیں۔

حج انتظامات سے متعلق سعودی وزارت حج کی جانب سے تفصیلات جاری

خیال رہے کہ سعودی عرب میں عازمین حج کے خیر مقدم کی تیاریاں مکمل کر لی گئی ہیں، سعودی وزارت حج و عمرہ کے مطابق حج سے متعلق 30 سے زائد اداروں کے تعاون سے اسٹریٹیجک اور آپریشنل منصوبے تیار کیے گئے ہیں، حجاج کرام کے لیے کرونا وائرس سے محفوظ رہائش گاہیں تیار کی گئی ہیں۔

عرفات کے خیموں کے ساتھ منیٰ اور مزدلفہ کی سہولیات بھی تسلی بخش طریقے سے فراہم کی گئی ہیں، دوران حج صحت مند ماحول کی فراہمی اور معاشرتی فاصلے کو یقینی بنایا جائے گا، عازمین حج کو رہائش گاہ سے مطلوبہ مقامات تک لے جانے کے لیے بسوں کا انتظام کر لیا گیا ہے، 50 حاجیوں کی گنجائش والی ایک بس 20 حاجیوں کے لیے مختص کی گئی ہے۔

عازمین حج 17 اور 18 جولائی کو پہنچنا شروع ہوں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں