spot_img

تازہ ترین

’فوج نے مینڈیٹ کے مطابق الیکشن کیلیے محفوظ ماحول فراہم کیا‘

کورکمانڈرز کانفرس کے شرکأ نے عام انتخابات میں الیکشن...

وزیراعظم شہباز شریف کی کابینہ میں کون کون شامل ہوگا ؟ بڑے نام سامنے آگئے

اسلام آباد : وزیراعظم شہباز شریف کی وفاقی کابینہ...

بانی پی ٹی آئی کی رہائی کیلیے قرارداد قومی اسمبلی میں جمع

پاکستان تحریک انصاف کے بانی کو رہا کرنے کی...

گلے کی سوزش کا آسان علاج

گلے میں خراش درد، خشکی یا خارش کے احساس کا نام ہے جو نگلنے کے ساتھ یا اس کے بغیر ہوسکتی ہے یہ تکلیف اکثر انفیکشن کے ساتھ ہوتی ہے، جیسے نزلہ یا فلو وغیرہ۔

گلے میں خراش کی متعدد وجوہات ہوسکتی ہیں جو کسی بنیادی بیماری کی وجہ نہیں ہیں، فضائی آلودگی،تمباکو نوشی، شراب نوشی اور آلودہ پانی کا استعمال اس کی وجوہات قرار دی جاتی ہیں۔

ایک محتاط اندازے کے مطابق دُنیا بَھر میں روزانہ لاکھوں افراد فضائی آلودگی سے متاثر ہوکر مختلف عوراض کا شکار ہورہے ہیں۔ ان عوراض میں سانس کی نالیوں اور گلے کی سوزش سر فہرست ہے۔ یہاں پر گلے کو سوزش کو کم کرنے اور آرام کے لیے چند کار آمد طریقے پیش کیے جارہے ہیں۔

شہد

ایک چائے کا چمچ شہد گرم پانی چائے میں ملا کر استعمال کرنے سے گلے کی سوزش دور کرنے میں مدد ملتی ہے۔ اس کی وجہ شہد میں موجود اینٹی بیکٹیریل اینٹی سوزش خواص ہیں جو گلے کو سوزش سے نجات دے کر آرام پہنچاتے ہیں۔

کیمومائل چائے اپنی سکون آور اور اینٹی سوزش خصوصیات کی وجہ سے جانی جاتی ہے۔ اس چائے ایک گرم گھونٹ گلے کی سوزش کو دورکر کے بے آرامی سے نجات دیتا ہے۔

پودینہ

پودینہ میں منتھول پایا جاتا ہے جو گلے میں آرام کا سبب بنتا ہے آپ اس کے لیے پودینے کی چائے بھی تیار کر سکتے ہیں یا پھر اسے سونگھ کر بھی اس کی افادیت حاصل کرسکتے ہیں۔

ادرک

ادرک میں اینٹی سوزش خصوصیات پائی جاتی ہیں جو گلے کے درد کو دور کرنے میں مددفراہم کرتی ہے۔ ادرک کی چائے تیار کر کے اس میں شہد ملا کر پینے سے گلے کی سوزش اور درد جاتا رہتا ہے۔

نیم گرم پانی سے غرارے کرنا

نمک ملے نیم گرم پانی سے غرارے کرنا گلے کی سوزش دور کرنے ایک قدیم ترین علاج ہے۔ یہ گلے کی سوجن کو دور کر کے عارضی آرام فراہم کرتا ہے۔

Comments

- Advertisement -