The news is by your side.

Advertisement

اسپیکر وزیر اعظم ملاقات، میشاق معیشت کمیٹی پر مشاورت، اپوزیشن رہنماؤں کو بھی شامل کرنے پر غور

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان اوراسپیکر قومی اسمبلی اسدقیصرکی ملاقات کی اندرونی کہانی سامنے آگئی جس کے مطابق میثاقِ معیشت کمیٹی میں سینیٹ و قومی اسمبلی کے اپوزیشن اراکین کو بھی شامل کرنے پر غور کیا گیا۔

ذرائع کے مطابق اسپیکر نے اعلیٰ سطح پر معیشت کے حوالے سے پارلیمانی کمیٹی بنانےسےمتعلق وزیراعظم سے مشاورت کی اور اُن کی رائے بھی لی۔ ذرائع کے مطابق میثاق معیشت کمیٹی میں سینیٹ وقومی اسمبلی ارکان کوشامل کئےجانےکاامکان ہے تاکہ سیاسی جماعتوں کےاہم رہنمامعیشت میں بہتری کیلئےتجاویزدےسکیں۔

کمیٹی کے قیام کی تجویز اپوزیشن جماعتوں نے دی تھی جس سے متعلق اسپیکر نے وزیراعظم سے مشاورت مکمل کرلی۔

اسد قیصر اور وزیراعظم کی ملاقات میں ملکی سیاسی صورت حال اور قومی اسمبلی کے امور پر گفتگو سمیت معاشی بحران سےنکالنےکیلئےسیاسی جماعتوں کومشاورتی عمل میں شامل کرنےپرغور کیا گیا تھا۔

مزید پڑھیں: بجٹ کو منظوری سے روکنے کے لیے اپوزیشن کمیٹی بنائے گی: بلاول بھٹو کا اعلان

اسپیکرقومی اسمبلی نےاعلیٰ سطح پارلیمانی کمیٹی قائم کرنےپروزیراعظم کواعتمادمیں لیا اور بریفنگ دی کہ کمیٹی میں شامل سیاسی رہنمامعیشت کی بہتری کیلئے تجاویز دےسکیں گے۔

وزیراعظم نے ملک میں سیاسی استحکام قائم رکھنے کے لیے اسد قیصر کے کردار کی تعریف کی اور قومی اسمبلی میں بجٹ اجلاس پرسکون انداز سے چلنے پر بھی اطمینان کا اظہار کیا۔

وزیراعظم نےایوان کوجمہوری اندازمیں چلانےپراسپیکرکےکردارکوسراہتے ہوئے کہا کہ ’’امیدہےایوان میں ہم آہنگی قائم رکھنےکے لیے تمام جماعتیں تعاون کریں گی، عمران خان نے بجٹ سیشن میں اپوزیشن کےاحتجاج اور پروڈکشن آرڈر کا معاملہ بہتراندازمیں حل ہونے پر بھی شاباش دی۔

یہ بھی پڑھیں: قومی سلامتی اجلاس : معاشی استحکام کی کوششوں‌ کی مکمل حمایت

عمران خان کا کہنا تھا کہ حکومت پارلیمنٹ میں جمہوری، اخلاقی اقدارکی پاسداری پریقین رکھتی ہے،میرےلئےایوان کےتمام ممبران برابرہیں۔ اسد قیصر کا کہنا تھا کہ قانون سازی کےایجنڈےمیں پیشرفت ضروری ہے، پاکستان کےعوام کی نظریں ایوان پرلگی ہوئی ہیں، پروڈکشن آرڈرکافیصلہ مشاورت کےبعدقانون کےمطابق کیاجاتاہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں