16.8 C
Ashburn
ہفتہ, مئی 18, 2024
اشتہار

اسٹیٹ بینک نے ملکی معیشت پر مبنی اہم رپورٹ جاری کردی

اشتہار

حیرت انگیز

اسٹیٹ بینک نے پاکستانی معیشت پر رواں مالی سال کی ششماہی رپورٹ جاری کردی ہے جس کے تحت مہنگائی کئی دہائیوں کی بلند سطح تک پہنچ گئی۔

اسٹیٹ بینک کی مذکورہ رپورٹ جولائی تا دسمبر مالی سال2023کے ڈیٹا کے نتائج پر مبنی ہے، پہلے6ماہ میں کرنٹ اکاؤنٹ، بنیادی مالیاتی توازن میں پالیسی پر مبنی بہتری ہوئی، بہتری کے باوجود ششماہی میں پاکستان کے معاشی حالات میں بگاڑ دیکھا گیا۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اہم خدشات میں عالمی معاشی حالات نے بھی منفی اثرات مرتب کئے، آئی ایم ایف پروگرام کے نویں جائزے کی تکمیل پر بےیقینی کے منفی اثرات ہوئے۔

- Advertisement -

اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ ناکافی بیرونی فنانسنگ اور کم ہوتے زرمبادلہ کے ذخائر کی وجہ سے مسائل میں اضافہ ہوا جس میں سیلاب کے نقصانات اور سیاسی عدم استحکام کی وجہ سے بھی مزید شدت آگئی۔

رپورٹ کے مطابق اس دوران زرعی پیداوار اور بڑے پیمانے کی اشیاء سازی دونوں کی پیداوار شدید متاثر ہوئی اور ملک میں مہنگائی کی شرح بڑھ کر کئی دہائیوں کی بلند سطح تک پہنچ گئی۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے پہلی ششماہی میں پالیسی ریٹ میں مزید 2.50 فیصد اضافہ کیا گیا، حکومت نے گرانٹس، زر اعانت اور ترقیاتی شعبوں میں وفاقی اخراجات کم کیے۔

اس کے علاوہ مالی سال کی پہلی ششماہی کے دوران کئی عوامل مہنگائی کو 25 فیصد تک لے گئے سیلاب سے سپلائی چین متاثر ہونے سے اشیائے ضروریہ کے نرخ بڑھ گئے، روپے کی قدر میں نمایاں کمی، بجلی کی قیمت میں اضافے سے مہنگائی کی رفتار مزید بڑھی۔

اسٹیٹ بینک کی رپورٹ مزید کہا گیا ہے کہ مالی سال 2023 کی پہلی ششماہی میں کارکنوں کی ترسیلات زر میں بھی کمی آئی، پہلی ششماہی کے دوران درآمدات میں نمایاں کمی ہوئی۔

Comments

اہم ترین

ویب ڈیسک
ویب ڈیسک
اے آر وائی نیوز کی ڈیجیٹل ڈیسک کی جانب سے شائع کی گئی خبریں

مزید خبریں