The news is by your side.

Advertisement

سرجیکل اسٹرائیک کا ثبوت مانگنے پر کانگریس رہنما کے خاندان کو جان سے مارنے دھمکی

ممبئی : مودی حکومت کے سرجیکل اسٹرائیک دعوے کے بعد ہندو انتہا پسند آپے سے باہر ہوگئے، اسٹرائیک کا ثبوت مانگنے پر کانگریس رہنما کے خاندان کو جان سے مارنے دھمکی دیدی، سنجے نروپم کی اہلیہ نے وزیراعظم نریندرمودی سے تحفظ کی اپیل کردی۔

سیاسی رہنماؤں سے لے کربالی ووڈ ایکٹر تک سرجیکل اسٹرائیک کا ثبوت مانگنے والے ہندو انتہا پسندوں کے نشانے پر ہے، کانگریس کے رہنما سنجے نروپم نے بھارت سرکار کے سرجیکل اسٹرائیک کے دعوی کو جعلی قرار دے کرثبوت کیا مانگا، ان کی اور ان کے خاندان کی زندگی کے لالے پڑگئے۔

قتل کی دھمکیاں ملنے پر سنجے نروپم کی اہلیہ جان کے تحفظ کے لئے نریندر مودی کو خط لکھنے پر مجبور ہوگئیں، سنجے نروپم کی اہلیہ کا کہنا ہے کہ جب سے سرجیکل اسٹرائیک کا ثبوت مانگا ہے، پورے خاندان کو قتل کی دھمکیاں دی جارہی ہیں۔


مزید پڑھیں : سرجیکل اسٹرائیک کا ثبوت مانگنے پر اروند کیجریوال پر سیاہی پھینک دی گئی


یاد رہے کہ سنجے نروپم ہندو انتہاپسندوں کا شکار بننے والے پہلے شخص نہیں، دلی کے وزیراعلی اروند کیجریوال پربھی سرجیکل اسٹرائیک کا ثبوت مانگنے کے جرم میں سیاہی پھینک دی گئی تھی۔


مزید پڑھیں : بالی ووڈ اداکار اوم پوری انتہا پسندوں کے سامنے مجبور


بالی ووڈ کے مشہوراداکار اوم پوری پاکستان کی حمایت میں بولے تو ہندو انتہا پسندوں کے ہاتھوں ان کی بھی شامت آگئی، اوم پوری کو اتنا ستایا گیا کہ انہیں معافی مانگنا پڑی

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں