The news is by your side.

Advertisement

طالبان نے بدترین تشدد کرکے ایک شخص کو ہلاک کردیا

کابل : افغانستان میں طالبان نے فضل احمد نامی شخص کو اذیت ناک موت دے کر ہلاک کردیا،مقتول کی آنکھیں نکال کر کھال اتار لی گئی۔

میں شام میں برسرپیکار شدت پسند تنظیم داعش کی طرف سے لوگوں کو موت کے گھاٹ اتارنے کے اذیت ناک طریقوں سے متاثر افغان طالبان بھی اسی ڈگر پر چل پڑے ہیں،اس بار طالبان کی بربریت کا نشانہ بننے والے فضل احمد مقامی شہری اور پیشہ کے اعتبار سے مزدور ہیں۔

برطانوی اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ دنوں افغانستان کے صوبہ غور میں طالبان نے فضل احمد نامی ایک مزدورکو اغواء کر کے اس کی کی آنکھیں نکال لیں،بعد ازاں فضل احمد کی کھال اتارکر اسے بلند پہاڑی سے نیچے پھینک کر موت کے گھاٹ اتار دیا۔

رپورٹ کے مطابق فضل احمد کے ایک دور کے رشتہ دار نے گزشتہ سال دسمبر میں ایک طالبان کمانڈر کو ہلاک کیا گیا تھا،اُس کے رشتہ دار تو فرار ہو گئے تھے تا ہم نا کردہ گناہ کی پاداش میں اُسے عبرت ناک موت سے دوچار ہونا پڑا۔

رپورٹ کے مطابق افغان پارلیمنٹ کے رکن رقیہ نائیل کا کہنا تھا کہ ”جب طالبان نے فضل کی زندہ کھال اتاری تو کھال اتارنے کے بعد بھی وہ درد کی شدت سے چیخ و پکار کر رہا تھا،طالبان نے اس کے سینے کی کھال اتارنے کے بعد سینہ چیر دیا تھا۔

برطانوی اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق طالبان نے اس واقعے قطعی لا تعلقی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہم معصوم اور بے قصور لوگوں سے انتقام لینے پر یقین نہیں رکھتے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں