The news is by your side.

Advertisement

مردم شماری: تیسری جنس کا خانہ نہ ہونے پر خواجہ سرا عدالت پہنچ گئے

پشاور: مردم شماری کے فارم میں تیسری جنس کا خانہ شامل نہ کیے جانے پر خواجہ سرا عدالت پہنچ گئے اور ہائی کورٹ میں پٹیشن دائر کردی۔

تفصیلات کے مطابق عدالت کے حکم کے باوجود مردم شماری کے فارم میں خواجہ سراﺅں کا خانہ شامل نہ ہونے پر ہائی کورٹ میں رٹ دائر کر دی گئی۔

رٹ خواجہ سرا ایسوسی ایشن کی جانب سے دائر کی گئی ہے جس میں وفاقی حکومت اور چیئرمین نادرا کو فریق بناتے ہوئے موقف اختیار کیا گیا ہے کہ قبل ازیں عدالت نے تیسری جنس خواجہ سرائوں کےلیے مردم شماری کے فارم میں خانہ شامل کرنے کا حکم دیا تھا تاہم اس حکم پر تاحال عمل درآمد نہیں ہوسکا، عدالت اپنے فیصلے کی تعمیل کرائے۔

خواجہ سراؤں کا موقف تھا کہ شناختی کارڈ میں خواجہ سراﺅں کے لیے خانہ مختص ہے تو پھر مردم شماری فارم میں کیوں نہیں؟

دریں اثناخواجہ سرائوں نے پاسپورٹ دو،حقوق دو،جو وعدے کیے تھے پورے کرو کے نعرے بھی لگائے۔

یہ بھی پڑھیں: پولیس اہلکاروں کی مبینہ زیادتی کے خلاف خواجہ سرا کی عدالت میں عرضی

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں