The news is by your side.

Advertisement

’کرونا ویکسین تین نومبر سے پہلے تیار ہوسکتی ہے‘

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کرونا ویکسین سے متعلق حوصلہ افزا دعویٰ کردیا۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق جمعرات کو ریڈیو پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے ٹرمپ نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ’مجھے یقین ہے کہ امریکا نومبر میں ہونے والے صدارتی انتخابات سے قبل کرونا ویکسین تیار کرلے گا‘۔

اُن کا کہنا تھاکہ ’مجھے امید ہے کہ ماہرین نومبر سے قبل ویکسین تیار کرلیں گے‘۔ امریکی میڈیا رپورٹ کے مطابق کرونا ویکسین کے حوالے سے تاریخ دینا ایک مثبت اشارہ ہے کیونکہ ٹرمپ کو یقین ہے کہ ماہرین ویکیسن کے معاملے پر کافی حد تک کامیابی حاصل کرچکے ہیں۔

مزید پڑھیں: پاکستان میں کرونا ویکسین سے متعلق بڑی پیش رفت

ٹرمپ نے اپنی گفتگو کو جاری رکھتے ہوئے کہا کہ ’کرونا ویکسین رواں سال کے اختتام سے قبل تیار ہوجائے گی‘۔ امریکی صدر سے سوال کیا گیا کہ تین نومبر سے پہلے ویکسین تیار ہوسکتی ہے تو ٹرمپ نے جواب دیا کہ ’میرا خیال سے کہ اس سے بھی پہلے تیار ہوجائے‘۔

یاد رہے کہ کرونا وائرس کو شکست دینے کے لیے دنیا کی دو سو سے زائد ادویہ ساز کمپنیاں ویکسین کی تیاری میں مصروف ہیں، اس دوڑ میں حصہ لینے والی بیس سے زائد کمپنیوں نے ویکسین کا انسانوں پر تجربے کا مرحلہ مکمل کرلیا ہے۔

اس سے قبل بھی امریکی صدر اس بات کے عزم کا اظہار کرچکے ہیں کہ کرونا ویکسین رواں سال کے اختتام سے قبل تیار ہوجائے گی۔

یہ بھی پڑھیں:امریکی کمپنی کو کرونا ویکسین کی تیاری کے لیے مزید رقم موصول

دوسری جانب عالمی ادارۂ صحت (ڈبلیو ایچ او) کے ماہرین واضح کرچکے ہیں کہ اگر کسی کمپنی نے ویکسین تیار بھی کرلی تب بھی اُسے آئندہ سال جولائی سے پہلے منظوری نہیں دی جاسکتی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں