The news is by your side.

Advertisement

امریکی عدالت میں 6 مسلمان ممالک پر سفری پابندی کا حکم بحال

واشنگٹن: امریکی عدالت نے 6 مسلم ممالک پر سفری پابندی کا صدارتی حکم بحال کردیا۔ عدالت کے مطابق قومی سلامتی کے پیش نظر سفری پابندی میں کوئی حرج نہیں۔

واضح رہے کہ رواں برس مارچ میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے 7 مسلمان ممالک کے شہریوں پر امریکا آنے پر پابندی عائد کی تھی۔ ان ممالک میں صومالیہ، ایران، شام، سوڈان، لیبیا، یمن اور عراق شامل تھے۔

ٹرمپ کے اس حکم نامے کو کئی ریاستوں نے اپنی عدالتوں میں چیلنج کردیا تھا جس کے بعد کچھ ریاستوں میں یہ پابندی معطل کردی گئی تھی۔

بعد ازاں ٹرمپ نے ترمیم شدہ سفری پابندی جاری کرتے ہوئے اس فہرست میں سے عراق کا نام نکال دیا تھا تاہم اس کے خلاف بھی ملک بھر میں مظاہرے جاری تھے جبکی کئی عدالتوں نے اس حکم نامے کو معطل قرار دیا تھا۔

بعد ازاں صدر ٹرمپ اس معطلی کو بھی مختلف عدالتوں میں لے گئے۔ اب ریاست کیلی فورنیا کی عدالت نے اس حکم نامے کو بحال کردیا ہے جس کے بعد ایران، شام، یمن، صومالیہ، لیبیا اور چاڈ کے شہریوں پر امریکا کے دروازے بند ہوگئے ہیں۔

امریکی عدالت کا کہنا ہے کہ قومی سلامتی کے پیش نظر سفری پابندی میں کوئی حرج نہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں