The news is by your side.

یوکرین نے روسی فوج سے 6 ہزار مربع کلومیٹر رقبہ واگزار کرانے کا دعویٰ کر لیا

کیف: یوکرین نے روسی فوج سے 6 ہزار مربع کلومیٹر رقبہ واگزار کرانے کا دعویٰ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق یوکرینی صدر زیلنسکی نے کہا ہے کہ 7 ماہ کی جنگ میں روس کو بدترین شکست کا سامنا ہے، ہم نے چھ ہزار مربع کلع میٹر رقبہ روسی فوج سے واپس لے لیا ہے۔

انھوں نے کہا جنوب اور مشرق میں ہم کامیابیوں کے بعد آگے بڑھ رہے ہیں، اور شمال اور مشرقی سرحد پر روسی فوج کو پیچھے دھکیل دیا ہے۔

یوکرینی ملٹری انٹیلیجنس نے دعویٰ کیا ہے کہ روس فوجی بڑے پیمانے پر ہتھیار ڈال رہے ہیں۔

دوسری جانب ترجمان کریملن کا کہنا ہے کہ زپورئیژا نیوکلیئر پاور پلانٹ سے روسی فوج کو ہٹانے کا روس کا کوئی منصوبہ نہیں ہے۔

کیا روس یوکرین جنگ کا پانسہ پلٹ گیا ہے؟

دیمیتری پیسکوف کا کہنا ہے کہ روس فوج زپورئیژا پاور پلانٹ کی حفاظت کر رہے ہیں، تاہم یوکرینی فوج کی گولہ باری سے پلانٹ کی تنصیبات کو شدید خطرہ ہے۔

انھوں ںے کہا کہ یوکرین کی پلانٹ کو دوبارہ قبضہ کرنے کی کوشش کو روسی فوج نے ناکام بنایا، پلانٹ پر گولہ باری چرنوبل جیسے سانحے کا باعث بن سکتی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں