The news is by your side.

Advertisement

اردو لیکچرر کی ملازمت، خواجہ سرا نے عدالت سے رجوع کر لیا

لاہور: لاہور میں ایک خواجہ سرا نے اردو لیکچر شپ نہ ملنے کے سلسلے میں عدالت سے رجوع کر لیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب پبلک سروس کمیشن میں کوٹہ مختص نہ ہونے پر خواجہ سرا فیض اللہ نے لاہور ہائی کورٹ سے رجوع کر لیا۔

لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس فیصل زمان خان نے خواجہ سرا فیض اللہ کی درخواست پر سماعت کی، عدالت نے لیکچر شپ کے لیے ہونے والے ٹیسٹ ملتوی کرنے کا حکم دیتے ہوئے ایڈووکیٹ جنرل پنجاب سے 2 ہفتوں میں جواب طلب کر لیا۔

درخواست گزار فیض اللہ کے وکیل علی زیدی نے مؤقف اختیار کیا کہ اردو لیکچرر کی پوسٹ کے لیے درخواست جمع کروائی گئی تھی تاہم خواجہ سرا ہونے کی وجہ سے درخواست کو مسترد کر دیا گیا۔

درخواست میں کہا گیا کہ خواجہ سراؤں کو لیکچرر کی پوسٹ پر بھرتی کے حوالے سے کوئی گنجائش نہیں دی گئی، یہ پالیسی بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہے۔

درخواست گزار نے عدالت سے استدعا کی کہ بطور پاکستانی شہری مجھے مقابلے کے امتحان کا اہل قرار دیا جائے اور عدالت پنجاب پبلک سروس کمیشن کی پالیسی کو کالعدم قرار دے۔

درخواست پر فاضل جج نے پنجاب بھر میں لیکچرر کے ٹیسٹ ملتوی کرنے کا حکم جاری کرتے ہوئے ایڈووکیٹ جنرل پنجاب سے 2 ہفتوں میں جواب طلب کر لیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں