The news is by your side.

Advertisement

نام ور شاعر جمیل الدین عالی کے مقبول ترین ملّی نغمات

پاکستان سے محبت، اتحاد اور اتفاق سے مل جل کر رہنے کا پرچار کرنے والے، امن اور سلامتی کا درس دینے اور اپنی تخلیقات کے ذریعے نوجوان نسل میں‌ جذبہ حب الوطنی اور جوش و ولولہ پیدا کرنے والے ادیبوں کا ذکر کیا جائے تو جمیل الدین عالی کا نام ہمارے سامنے آتا ہے جن کے ملّی نغمات ہمارا سرمایہ ہیں۔

جمیل الدین عالی پاکستان سے محبت کا پرچار اور اردو کی ترقی کے لیے کوشاں رہے۔ انھوں نے جو ملّی نغمے لکھے انھیں‌ لازوال شہرت اور مقبولیت حاصل ہوئی۔ یہاں ہم ان کے چند مقبولِ عام نغمات کا ذکر کررہے ہیں جنھیں‌ آپ نے آج بھی جشنِ آزادی کی تقریبات میں شرکت کے دوران یا اپنے گھروں میں‌ ٹیلی ویژن پر سنا ہو گا۔

جیوے… جیوے… جیوے پاکستان
پاکستان، پاکستان جیوے پاکستان…

یہ ملّی نغمہ جیسے ہر دل کی دھڑکن اور ایک ایسی دُعا بن گیا جو ہر لب پر جاری ہے کہ پاکستان ہمیشہ قائم و دائم، زندہ و پائندہ رہے۔ 90 کی دہائی میں‌ جمیل الدین عالی کا یہ نغمہ ملک کی فضاؤں میں گونجا اور دنیا بھر میں ہماری پہچان بن گیا۔

پاکستان میں اسلامی سربراہی کانفرنس کے موقع پر قوم نے جذبات اور امنگوں سے بھرپور ایک ترانہ سنا اور یہ بھی بچے بچے کی زبان پر جاری ہو گیا۔

اس کے بول تھے: ہم تا بہ ابد سعی و تغیر کے ولی ہیں، ہم مصطفوی، مصطفوی، مصطفوی ہیں…

سندھ کے لوک فن کار علن فقیر کی آواز میں‌ یہ ملّی نغمہ بہت مشہور ہوا جس کے بول ہیں: اتنے بڑے جیون ساگر میں‌، تُو نے پاکستان دیا….

اس گیت کے خالق بھی جمیل الدین عالی ہیں اور جب 1965 میں‌ دشمن نے ہمیں للکارا تو جرات و بہادری اور سرفروشی کی تاریخ رقم کرنے والے سپاہیوں تک جمیل الدین عالی نے قوم کے جذبات ان الفاظ میں‌ پہنچائے:

اے وطن کی سجیلے جوانو، میرے نغمے تمہارے لیے ہیں…

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں