site
stats
عالمی خبریں

رشوت لینے کا الزام، امریکی بحریہ کے 9افسروں پر فرد جرم عائد

واشنگٹن : رشوت لینے کے الزام پر امریکی بحریہ کے ریٹائرڈ ایڈمرل سمیت نو حاضرسروس اور ریٹائرڈ افسروں پر فرد جرم عائد کردی گئی۔

امریکی بحریہ کو اسکینڈل کے طوفان کا سامنا ہے، نو ریٹائرڈ اور حاضر سروس افسران کو رشوت اور مراعات لینے پر لینے کے دینے پڑگئے، امریکی میڈیا کے مطابق امریکی بحریہ کے ریٹائرڈ ایڈمرل سمیت نو افسروں پر رشوت لینے کے الزام میں فرد جرم عائد کردی گئی۔

navy

امریکی بحریہ کے افسروں پر ایک غیر ملکی کونٹریکٹر کی جانب سے پرتعیش سفری سہولتیں اور دیگرمراعات قبول کرنے کا الزام ہے جبکہ بدلے میں امریکی بحریہ کے افسروں نے کونٹریکٹر کو بحریہ کی خفیہ اور اندرونی معلومات فراہم کیں۔


امریکی بحریہ کے اعلیٰ افسر کو قید کی سزا اور جرمانہ


گزشتہ سال امریکی بحریہ کے ایک اعلیٰ افسر کو کرپشن کا جرم ثابت ہونے پر ساڑھے 6  برس قید اور بھاری جرمانہ عائد کیا گیا تھا ، امریکی بحریہ کے کمانڈراور سیونتھ فلیٹ بحری بیڑے کے اعلیٰ اہلکار مائیکل وینیک پر الزام تھا کہ انہوں نے لاکھوں ڈالرز رشوت کے عوض امریکی بحریہ کی خفیہ معلومات ایک ملائشین ڈیفینس کنٹریکٹرکو فراہم کیں تھیں۔

واضح رہے کہ امریکی بحریہ میں بدعنوانی کی تحقیقات دو ہزار تیرہ میں شروع ہوئی تھیں اوراب تک پچیس حاضرسروس اور ریٹائرڈافسروں پر رشوت لینے پر فردجرم عائد کی جا چکی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top