The news is by your side.

Advertisement

امریکی ریاستوں میں برفانی طوفان نے نظام زندگی مفلوج کردیا

نیو یارک : امریکا میں زبردست برفانی طوفان کے بعد ریاست نیو جرسی اور فلاڈیلفیا کے بعد اب نیویارک میں بھی ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے، شہریوں کیلئے غیر ضروری سفر کرنا بھی ممنوع قرار دیا گیا ہے۔

امریکی ریاستوں نیویارک اور انیو جرسی میں طوفان کے بعد ہنگامی حالت کا اعلان کیا گیا ہے، اس حوالے سے متعلقہ محکمے نے بتایا ہے کہ بعض علاقوں میں60 سینٹی میٹر تک برف پڑے گی۔

متحدہ امریکہ کے وسطی مغربی علاقوں میں آنے والے برفانی طوفان نے ملک کے مشرقی علاقوں میں روز مرہ کی زندگی کو مفلوج کرکے رکھ دیا ہے۔

امریکی محکمہ موسمیات نے خبردار کیا ہے کہ برفانی طوفان نیو یارک اور نیو جرسی ریاستوں کو منگل تک جبکہ مائین اور ورمونٹ جیسی شمال مشرقی ریاستوں کو بروز بدھ تک اپنے زیر اثر لے گا۔

اس حوالے سے نیو یارک بلدیہ میئر بل دی بلاسیو کا کہنا ہے کہ برفانی طوفان کے دوران اندرونِ شہر آمدورفت پر پابندی عائد کی گئی ہے تو میٹرو اور ٹراموے کے سفروں میں بھی حد بندی لائی جائیگی۔

نیو جرسی کے گورنر فیل مرفی نے بتایا ہے کہ پیر کی صبح 1500 سے زائد مکانات کو بجلی کی ترسیل منقطع ہے، مزید برفباری سے یہ خلل جاری رہنے کا خدشہ موجود ہے۔ قومی محکمہ موسمیات نے مشرقی علاقوں میں سطح سمندر میں اضافہ ہو سکنے کا انتباہ بھی دیا ہے۔

برفانی طوفان کے باعث نیو یارک، نیو جرسی اور پنسلووینیا سمیت ملک کے مشرقی علاقوں کے متعدد ہوائی اڈوں پر ہوائی سفروں کو منسوخ کر دیا گیا ہے۔

وائٹ ہاؤس کے ترجمان جین پساکی کا کہنا ہے کہ صدر جو بائڈن کو برفانی طوفان کے بارے میں آگاہی کرائی گئی ہے اور ان کا متعلقہ ریاستوں کی انتظامیہ سے رابطہ قائم ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں