The news is by your side.

Advertisement

ای سگریٹ پینے والوں میں کرونا وائرس کا خطرہ بڑھ گیا، نئی تحقیق سامنے آگئی

کراچی : غیر ملکی ماہرین نے برقی سگریٹ کا استعمال کرنے والے نوجوانوں کے کرونا وائرس سے بہت جلد اور شدت سے متاثر ہونے کا دعویٰ کردیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق اسٹینفورڈ اسکول آف میڈیسن کے تحقیق کاروں نے یہ دعویٰ اپنی حالیہ تحقیق میں کیا ہے، جو 11 اگست کو جرنل آف ایڈولیسینٹ ہیلتھ میں شائع کی گئی ہے۔

محقیقین کا کہنا ہے کہ جو نونوان ای سگریٹ کا استعمال کرتے ہیں جو سگریٹ نوشی کرنے والے افراد کی نسبت کرونا کا بہت جلد شکار بن جاتے ہیں۔

محقیقین کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس سے متاثر ہونے والے افراد میں ای سگریٹ پینے والے افراد کی تعداد زیادہ تھی اور ان میں عام مریضوں کی نسبت علامات 5 گنا زیادہ تھیں۔

ماہرین کا کہنا تھا کہ ای سگریٹ پینے والے کرونا مریضوں میں کھانسی، بخار، تھکاوٹ اور سانس لینے میں دشواری کے مسائل عام کرونا مریضوں کی نسبت زیادہ ہیں۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا ہے کہ حالیہ تحقیق سے اس بات کی بھی نفی ہوجاتی ہے کہ جس میں دعویٰ کیا گیا تھا کہ سگریٹ نوشی کرنے والے افراد میں کرونا وائرس پھیلنے کا خطرہ کم ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں