The news is by your side.

Advertisement

نعیم راشد شہید کی والدہ کو نیوزی لینڈ کا ویزا جاری، وزارتِ خارجہ میں کرائسس مینجمنٹ سیل قائم

اسلام آباد: نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں مسجد حملے میں شہید ہونے والے پاکستانی شہری نعیم راشد کی والدہ کو نیوزی لینڈ کا ویزا جاری کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق نعیم راشد شہید کی والدہ کا نیوزی لینڈ کا ویزا جاری کر دیا گیا ہے، شہید کی والدہ نماز جنازہ اور تدفین میں شرکت کریں گی۔

نعیم راشد کی والدہ نے نیوزی لینڈ جانے کی خواہش کا اظہار کیا تھا، جس پر وزارتِ خارجہ کی جانب سے انھیں نیوزی لینڈ کا ویزا جاری کیا گیا۔

دریں اثنا، وزارتِ خارجہ میں سانحہ نیوزی لینڈ کے حوالے سے کرائسس مینجمنٹ سیل بھی قائم کر دیا گیا ہے، وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ شہدا کے لواحقین کو تمام ممکنہ سہولیات فراہم کی جائیں گی۔

شاہ محمود نے کہا کہ شہدا کے لواحقین کو درپیش مشکلات کے فوری ازالے کے لیے سیل قائم کیا گیا ہے، سانحے کے باقی شہدا کے لواحقین کے ساتھ بھی رابطے میں ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  سانحہ کرائسٹ چرچ: حکومت پاکستان کا پرچم سرنگوں کرنے کا اعلان

واضح رہے کہ کرائسٹ چرچ میں حملے کے سوگ میں پاکستان نے فیصلہ کیا ہے کہ کل قومی پرچم سرنگوں کیا جائے گا اور ملک بھر میں یومِ سوگ منایا جائے گا۔ پاکستان نے سانحے پر احتجاج بھی ریکارڈ کرایا ہے۔

میتوں کی حوالگی کا عمل کل سے شروع ہوگا، 6 خاندان اپنے افراد کی تدفین وہیں کرائسٹ چرچ میں کرنا چاہتے ہیں جب کہ 3 خاندانوں نے کہا ہے کہ وہ اپنے پیاروں کو پاکستان میں دفن کرنا چاہتے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں