The news is by your side.

Advertisement

ٹک ٹاک پر شوہر کے انتقال کی جھوٹی ویڈیو بنانے والی خاتون کے لیے بری خبر

لیاقت پور: ٹک ٹاک پر شوہر کے انتقال کی جھوٹی ویڈیو بنانے والی خاتون نے شاید سوچا نہیں تھا کہ جو ویڈیو وہ بنانے جا رہی ہے، وہ ان کے لیے کیسی مصیبتیں کھڑی کر سکتی ہے۔

خاتون کے خلاف لاہور سائبر کرایم سیل میں ایک وکیل نے درخواست دے دی ہے، درخواست میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ خاتون کو شوہر کی موت کی جھوٹی ویڈیو بنانے پر سزا دی جائے۔

لاہور سائبر کرائم سیل میں اندراج مقدمہ کی درخواست ایڈووکیٹ شہباز احمد نے دی ہے، جس میں خاتون اور شوہر کے خلاف مقدمہ درج کر کے سزا دینے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز رحیم یار خان کے شہر لیاقت پور میں خاتون نے اپنے ٹک ٹاک فالوورز بڑھانے کے لیے اپنے شوہر کے انتقال کی جھوٹی خبر پر مبنی ویڈیو اپ لوڈ کر دی تھی، جس پر اہل علاقہ کی بڑی تعداد گھر کے باہر جمع ہوئی تو حقیقت سامنے آ گئی۔

خاتون نے ٹک ٹاک پر شوہر کے انتقال کی جھوٹی خبر دے دی

خاتون نے ویڈیو میں رونے کی اداکاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’عادل نہیں رہے، ان کا کار ایکسیڈنٹ ہوا اب وہ اس دنیا میں نہیں رہے۔‘

سوشل میڈیا پر تیزی سے وائرل ہونے والی ویڈیو میں خاتون کہتی نظر آتی ہے ’عادل نہیں رہے، عدنان کی کال آئی تھی، اس نے بتایا عادل کا ایکسیڈنٹ ہو گیا ہے وہ نہیں رہے، میرے ساتھ ہی ایسا کیوں ہوا؟‘

ٹک ٹاک اسٹار عادل راجپوت کی جھوٹی خبر سوشل میڈیا پر تیزی سے وائرل ہو گئی تھی اور عادل راجپوت کا ٹاپ ٹرینڈ بن گیا تھا، جہاں سوشل میڈیا صارفین نے ان کی موت کی افواہ پر تعزیت کا اظہار بھی کیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں