The news is by your side.

Advertisement

بھارت کا غیر قانونی اقدام، آج دنیا بھر میں ”یوم استحصال “منایا جارہا ہے

اسلام آباد : گزشتہ سال 5 اگست کے یکطرفہ ظالمانہ اور غیر قانونی بھارتی اقدام کو ایک سال مکمل ہونے پر مقبوضہ کشمیر، آزاد کشمیر اور پاکستان میں آج ”یوم استحصال “منایا جا رہا  ہے۔

اس سلسلے میں آج پورے پاکستان میں ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی جائے گی، دنیا بھر میں مودی سرکار کی طرف سے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کی مذمت اور مظلوم کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیا جائے گا۔

”یوم استحصال“کے موقع پر آزاد کشمیر، پاکستان اور دنیا بھر میں احتجاجی مظاہرے اور ریلیوں کا انعقاد کیا جائے گا۔ صبح 10 بجے سائرن بجا کر ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی جائے گی۔

صدر مملکت شاہراہ دستور پر دس بج کر پانچ منٹ پر میڈیا سے گفتگو کریں گے اور خصوصی یادگاری ٹکٹ جاری کیے جائیں گے۔ اس کے علاوہ کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لیے انسانی ہاتھوں کی زنجیریں بنائی جائیں گی۔

اسلام آباد کی مشہور شاہراہ کشمیر ہائی کو سری نگر ہائے وے کا باضابطہ نام دیا جائے گا، وزیر اعظم عمران خان اس دن کی مناسبت سے آزاد کشمیر اسمبلی سے خطاب کریں گے اور یکجہتی واک میں شرکت کریں گے۔

اس کے علاوہ بزرگ حریت رہنما سید علی گیلانی نے 5 اگست کو پورے مقبوضہ کشمیر میں شٹر ڈاؤن ہڑتال کی کال دی ہے۔ یوم استحصال کشمیر تقریبات میں بھارت کے 5 اگست 2019 کے یک طرفہ اور غیر قانونی اقدام کو بے نقاب کیا جائے گا۔

مزید پڑھیں : یوم استحصال کشمیر: صدر مملکت آج سینیٹ سے خطاب کریں گے

یاد رہے کہ یوم استحصال کشمیر کے موقع پر چئیرمین سینیٹ صادق سنجرانی کی زیر صدارت سینیٹ کا خصوصی اجلاس آج ہوگا، صدر مملکت عارف علوی ایوان بالا سے خصوصی خطاب کریں گے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ صدرِ پاکستان مقبوضہ کشمیر میں مظالم سے متعلق اقوام عالم کی توجہ مبذول کرائیں گے،مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں خطاب کا حصہ ہوں گی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں