The news is by your side.

Advertisement

حکومت نے ای او بی آئی پینشنرز کو بڑی خوشخبری سنادی

اسلام آباد : وزیراعظم کے معاون خصوصی زلفی بخاری نے کہا ہے کہ ہم بنیادی پنشن کو پندرہ ہزار روپے تک لے کر جانا چاہتے ہیں ، رواں سال کے آخر تک دس ہزار روپے تک بڑھا دیں گے۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت نے مالی خسارے سے نکالنے کیلئےای او بی آئی کی پراپرٹی کو لیز پر دینے کا آغاز کر دیا ہے ، وزیراعظم کے معاون خصوصی زلفی بخاری نے ای او بی آئی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سابق دور حکومت میں ای او بی آئی کا ادارہ مسلسل نقصان میں تھا نقصان میں جانے سے پینشنرز کی فلاح کے منصوبے رکاوٹ کا شکار تھے۔

زلفی بخاری کا کہنا تھا کہ ماضی کی کرپشن اور بد انتظامی کی وجہ سے ادارہ تباہ کر دیا، 6 سال میں 150 کروڑ روپے تک کا نقصان برداشت کرچکے ہیں۔

انھوں نے مزید کہا کہ اوای سی ٹاور ایک نجی کمپنی کو لیز پر دینے کا فیصلہ کیا ہے، ہماری بر وقت کوششوں سے اس ادارے کو نقصان سے نکالا گیا، ای او بی آئی کی مزید پراپرٹی کو لیز پر دینے سے پینشنرز کو فائدہ پہنچے گا۔

مزید پڑھیں : ای او بی آئی پنشن 5250 روپے سے بڑھ کر 6500 روپے ہو گئی

زلفی بخاری کا کہنا تھا کہ ہم بنیادی پنشن کو پندرہ ہزار روپے تک لے کر جانا چاہتے ہیں، بنیادی پنشن ہر مزدور کا بنیادی حق ہے سب تک پہنچائیں گے، بنیادی پنشن میں 23 فیصد اضافہ کر چکے ہیں رواں سال کے آخر تک دس ہزار روپے تک بڑھا دیں گے۔

یاد رہے رواں سال جنوری میں ای اوبی آئی پنشن 5250 روپے سے بڑھا کر 6500 روپے کر دی گئی تھی ، ای او بی آئی پنشن میں اضافہ پچھلے سال نومبر میں تجویز کیا گیا تھا، پنشن میں اضافے کے لیے وزیرِ اعظم کے معاونِ خصوصی زلفی بخاری نے اہم کردار ادا کیا تھا۔

معاون خصوصی زلفی بخاری نے کہا تھا کہ ای او بی آئی میں شفافیت لائی گئی ہے، اصلاحات بھی لائی جا رہی ہیں، ای او بی آئی پنشن کو مزید بڑھانے پر بھی کام ہو رہا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں