The news is by your side.

Advertisement

زلفی بخاری نے بھی ملک میں پیٹرول سستا قرار دے دیا

اسلام آباد: وزیر اعظم کے معاون خصوصی زلفی بخاری نے بھی ملک میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ریکارڈ اضافے پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان میں فیول کی قیمتیں اب بھی سب سے کم ہیں۔

زلفی بخاری نے پیٹرول کی قیمتوں کا موازنہ جنوری کے مہینے کی قیمتوں سے کرتے ہوئے لکھا کہ جنوری کے مقابلے میں پیٹرول 17 اور ڈیزل 26 روپے فی لیٹر سستا ہے، واضح رہے پاکستان سمیت پوری دنیا میں لاک ڈاؤن کے باعث پیٹرول کی کھپت بالکل ہی ختم ہونے کے بعد اس کی قیمتیں بہت زیادہ گر گئی تھیں، پاکستان میں بھی اپریل میں قیمتوں میں بڑی کمی شروع ہوئی۔

زلفی بخاری کا مؤقف ہے کہ ڈیڑھ ماہ میں دنیا میں پیڑول کی قیمتیں 112 فی صد بڑھیں، لیکن ہمارے ملک میں پیٹرول کی قیمتوں میں صرف 23 فی صد اضافہ ہوا۔ ادھر فاقی وزیر برائے توانائی عمر ایوب نے قومی اسمبلی میں خطاب میں کہا کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کرنا ہماری مجبوری ہے، ہمارے پاس پیٹرول کے اپنے وسائل نہیں ہیں۔

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں‌ ریکارڈ اضافہ

انھوں نے بھی کہا کہ جنوری کے مقابلے میں پاکستان میں پیٹرول 17 روپے فی لیٹر اس وقت بھی کم ہے، پاکستان میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں ایشیا میں سب سے کم ہیں۔

دوسری طرف آج ذرایع نے انکشاف کیا ہے کہ حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کے لیے ٹیکسز کی بھرمار کر دی ہے، پیٹرول اور ڈیزل پر لیوی کی انتہائی حد 30 روپے مقرر کی گئی ہے۔

ذرایع کا کہنا ہے کہ پیٹرول پر سیلز ٹیکس کی شرح 17 فی صد مقرر کی گئی ہے، ہائی اسپیڈ ڈیزل پر زیادہ سے زیادہ 30 روپے فی لیٹر پیٹرولیم لیوی کی وصولی کی جا رہی ہے، جب کہ ہائی اسپیڈ ڈیزل پر سیلز ٹیکس کی شرح 17 فی صد مقرر کی گئی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں