The news is by your side.

Advertisement

امریکہ : سفاک باپ نے دس سالہ بیٹے کو چھریوں کے وار سے قتل کردیا

واباش : امریکہ میں سفاک شخص نے بیوی سے جھگڑے کے دوران بیٹے کو چھریاں مار کر زخمی کردیا جو بعد ازاں چل بسا، پولیس آنے پر ملزم نے افسر پر بھی فائرنگ کردی۔

امریکی ریاست انڈیانا کے شہر واباش میں بیوی سے جھگڑے کے بعد بیٹے کو چھریوں کے وار کرکے قتل کردیا، پولیس پہنچنے پر ملزم نے افسر کی ٹانگ پر گولی ماردی۔

انڈیانا اسٹیٹ پولیس کے مطابق واقعہ گزشتہ روز پیش آیا، جمعہ کے روز صبح 7 بجے کےقریب 294 ایسٹ میپل اسٹریٹ واباش میں32سالہ شخص ولیم سنیلباچ کی اپنی بیوی سے کسی بات پر تلخ کلامی ہوئی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق بحث کے دوران ملزم نے طیش میں آکر اپنے دس سالہ بیٹے کیڈن سنیلباچ کے سینے پر پے در پے چھریوں کے وار کیے جس سے وہ شدید زخمی ہوگیا۔

زخمی لڑکے کو تشویشناک حالت میں طبی امداد کیلئے قریبی اسپتال منتقل کیا گیا، جہاں وہ بعد ازاں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دوران علاج ہلاک ہوگیا۔

واقعے کی اطلاع ملنے پر پولیس پارٹی جائے وقوعہ پر پہنچی اور ملزم سے تفتیش کرنا چاہی تو ملزم نے پولیس افسر کی ٹانگ میں گولی ماردی، پولیس نے جوابی فائرنگ کرتے ہوئے ملزم کو زخمی کرکے گرفتار کرلیا۔

انڈیانا اسٹیٹ پولیس کے پبلک انفارمیشن آفیسر سارجنٹ ٹونی سلوکوم نے کہا کہ یہ ایک المناک صورتحال ہے، یہ بات ذہنوں کو حیرت میں ڈال دیتی ہے کہ کیوں کوئی اپنے دس سالہ بچے کو چھرا گھونپتا ہے اور پھر پولیس افسر پر بھی گولی چلانا چاہتا ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ اب ملزم سے قتل کی تفتیش جاری ہے حالانکہ اس وقت ولیم سنیلباچ پر فرد جرم عائد نہیں کی گئی ہے۔ ملزم کو جائے وقوعہ سے فورٹ وین اسپتال لے جایا گیا۔ پولیس کے مطابق ملزم کی فائرنگ سے زخمی ہونے ولا افسر بروبیکر صحت یاب ہو رہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں