کنکریٹ کے بجائے لکڑی سے تیار ہونے والی انوکھی اور عالی شان عمارت
The news is by your side.

Advertisement

لکڑی سے تیار ہونے والی انوکھی اور عالی شان عمارت

اوسلو: یوں تو عموماً گھروں اور عمارتوں کی تیاری کے لیے لوہے، سیمنٹ اور کنکریٹ کا استعمال کیا جاتا ہے لیکن ناروے میں ایک ایسی انوکھی عمارت سامنے آئی جس کی تیاری کے لیے لکڑیوں کا استعمال کیا جا رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ناروے کے علاقے برومنڈال میں ایک ایسی عمارت زیر تعمیر ہے جس کی تکمیل کے لیے سیمنٹ، بجری، کنکریٹ اور دیگر ضروری اشیا کے بجائے ناروے کے جنگلات سے حاصل کردہ لکڑیوں کا استعمال کیا جارہا ہے، جو آئندہ سال مکمل کر لی جائے گی۔

منتظمین کے مطابق اس عمارت کی تعمیر مارچ 2019 میں مکمل کر لی جائے گی، اس 18 منزلہ عمارت میں 67 تا 149 مربع میٹر کے 27 اپارٹمنٹس تیار کیے جائیں گے،علاوہ ازیں ایک ہوٹل، سوئمنگ پول، دفاتر اور ریستوران بھی اس عمارت میں موجود ہوں گے۔

مٹی سے بنی چار سو سال پرانی عمارت میں رہنے والا سعودی شہری

خیال رہے کہ ویانا میں بھی اس وقت لکڑی کی مدد سے 84 میٹر بلند عمارت تعمیر کی جارہی ہے جو 24 منزلوں پر مشتمل ہے، تاہم اس عمارت میں سیڑھیاں سیمنٹ سے تیار کی جائیں گی، ویانا میں قائم کی جانے والی اس عمارت میں اپارٹمنٹس، دفاتر اور دکانیں وغیرہ بھی موجود ہوں گے۔

پہاڑوں کے دامن میں لکڑی سے بنی منفرد مسجد

واضح رہے کہ اس وقت دنیا میں آسٹریا کے لکڑی کی صنعتی استعمال کو نہایت اہمیت حاصل ہے اور یہ دنیا بھر میں کراس لیمینیٹڈ لکڑی کی پیدوار میں سرفہرست بھی ہے، تیرنے ضلع میں قائم 9 منزلہ عمارت کراس لیمینیٹڈ لکڑی اور شیشے سے بنائی گئی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں