The news is by your side.

Advertisement

’’بیان پر قائم ہوں، پنجابیوں سے معافی نہیں مانگی‘‘

لاہور: پشتون خوا ملی عوامی پارٹی کے سربراہ محمود خان اچکزئی کا کہنا ہے کہ اپنے بیان پر قائم ہوں، پنجابیوں سے متعلق بیان پر کوئی معافی نہیں مانگی۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق پشتون خوا ملی عوامی پارٹی کے سربراہ اپنے بیان پر ڈٹ گئے، صحافی کے سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ بیان پر قائم ہوں، پنجابیوں سے معافی نہیں مانگی۔

محمود خان اچکزئی نے کہا کہ میرے نام پر ٹویٹر اکاؤنٹ سے معذرت کی گئی، اکاؤنٹ جعلی ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے جلسے میں محمود خان اچکزئی نے پنجابیوں سے متعلق تنقید کی تھی ، ان کے بیان کی وفاقی وزیر فواد چوہدری، معاون خصوصی برائے سیاسی روابط شہباز گل نے مذمت کی تھی۔

یہ پڑھیں: ’’بیرونی طاقتوں کے آلہ کار’اچکزئی‘ ایک مشن پر ہیں‘‘

فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ محمود اچکزئی ایک مشن پر ہیں، نسل درنسل یہ لوگ پاکستان کے مخالف ہیں، یہ پاکستان میں بیرونی طاقتوں کے آلہ کار کا کردار ادا کررہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ پنجاب کا بہادر مہاراجہ رنجیت سنگھ انگریزوں کےخلاف ڈٹا رہا، رنجیت سنگھ نے اپنی زندگی میں انگریوں کو پنجاب آنے نہ دیا، بھگت سنگھ جیسابہادربھی پنجاب میں ہی پیداہوا، یہ ساری باتیں محمود اچکزئی سے اوپرکی سطح کی باتیں ہیں۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ ن لیگ کی عزت پنجاب کی وجہ سے ہے، پنجاب سے ن لیگ کو 14 سیٹیں ملیں، پنجاب کے ووٹ لےکر آئے اور ساری بکواس سنتے رہے، سعد رفیق چند دن پہلےکہہ رہے تھےجاگ پنجابی جاگ،کل کھانسی کاشربت پی رہے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں