The news is by your side.

Advertisement

شامی اسپتالوں پر فضائی بمباری، اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کی شدید مذمت

نیویارک: اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس نے شام کے اسپتالوں پر کی جانے والے حالیہ بمباری کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

تفصیلات کے مطابق شام کے مغربی شہروں میں قائم طبی مراکز پر حالیہ دنوں میں فضائی کارروائیاں کی گئی تھیں جس کے نتیجے شعبہ صحت کے کئی اہلکار مارے گئے تھے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق اب تک یہ واضح نہ ہوسکا کہ مذکورہ حملے کس نے کیے، روس اور بشار حکومت ایک دوسرے کو حملے کا ذمے دار ٹھہراتے ہیں۔

اس سے قبل بھی متعدد بار فضائی حملے کیے جاچکے ہیں، جس کی زد میں اسپتال، امدادی ٹرکس اور مساجد بھی آئے، جبکہ درجنوں ریسکو اہلکار بھی مارے جاچکے ہیں۔

اقوا متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیوگوتریس نے حالیہ فضائی حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہریوں اور شہری انفرا اسٹرکچر جس میں طبّی تنصیبات شامل ہیں ان کا تحفظ لازم ہے۔

شامی شہر ادلب میں فوج اور باغیوں کے درمیان شدید چھڑپیں، 72 افراد ہلاک

ان کا کہنا تھا کہ جو کوئی بھی بین الاقوامی انسانی قانون کی خلاف ورزی کا ارتکاب کرے، اُس کا احتساب ہونا چاہیے۔

یاد رہے کہ حال ہی میں شام میں اتحادی افواج کی جانب سے ایک گاﺅں پر کی جانے والی بمباری سے سات بچوں سمیت چودہ افراد جاں بحق ہوگئے تھے، چار ماہ میں اب تک 520 بے گناہ افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں۔

واضح رہے کہ گذشتہ روز شامی فوج اور باغیوں کے درمیان جھڑپوں کے نتیجے میں لاشوں کے انبار لگ گئے تھے، دونوں طرف سے 72 افراد ہلاک اور سینکڑوں زخمی بھی ہوئے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں