The news is by your side.

فضائی آلودگی: بھارت نے بدترین ریکارڈ اپنے نام کرلیا

جنوبی ایشیا میں فضائی آلودگی کا سب سے بڑا ذمے دار کون سا ملک ہے؟ حالیہ تحقیق نے قلعی کھول دی۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق حالیہ تحقیق میں یہ بات سامنے آئی کہ امریکا اور چین کے بعد ہندوستان موسمیاتی تبدیلی کا سب سے زیادہ ذمہ دار ہے جو بھاری مقدار میں گرین ہاؤس گیسوں کا اخراج کرتا ہے۔

اور اس نے فضائی آلودگی کے معاملے پر بنگلہ دیش کو بھی پیچھے چھوڑدیا ہے۔

ہیلتھ ایفیکٹس انسٹی ٹیوٹ آف امریکا کی جانب سے کی گئی اس تحقیق سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ عالمی ادارہ صحت کی گائیڈ لائنز بھی حفاظت کی ضمانت نہیں ہیں۔India accounted for around 44% of world's increase in air pollution since  2013: Report | India News | Zee Newsوجہ صاف ظاہر ہے کہ یہ گائیڈ لائنز آلودگی کی نصف سطح پر بھی صحت کو متاثر کر سکتی ہیں۔

تحقیق میں بتایا گیا کہ بھارت میں فضائی آلودگی کا معیار عالمی ادارہ صحت کے رہنما اصولوں سے سات گنا زیادہ ہے۔

ادھر بھارت کے مرکزی وزیر ماحولیات کا مضحکہ بیان ہے کہ فضائی آلودگی کسی کو بیمار نہیں کرتی، کسی کی عمر کم نہیں کرتی اور کسی کی جان بھی نہیں لیتی۔

ہیلتھ ایفیکٹس انسٹی ٹیوٹ آف امریکا کی جانب سے اسی طرح تحقیقی امریکا کی چھ کروڑ آبادی اور یورپ کی تین کروڑ کی آبادی میں بھی کی گئی۔India home to 22 of 30 most polluted cities in the world: report - Nikkei  Asiaہر ایک تحقیق کا ایک ہی نتیجہ نکلا کہ فضائی آلودگی کی کوئی بھی سطح انسانی صحت کے لئے محفوظ نہیں۔

رواں سال جولائی میں برطانیہ میں سائنسدانوں کے ایک مقالے کے مطابق فضائی آلودگی کے زیر اثر انسان جنونی ہو جاتا ہے اور پاگلوں کی طرح برتاؤ کرتا ہے۔

امریکی سائنسدانوں کے نزدیک روڈ ٹرانسپورٹ سے پیدا ہونے والی آلودگی سے دمہ کے دورے پڑتے ہیں اور صحت مند انسان بھی دمہ کا شکار ہو سکتا ہے۔

تحقیق کے مطابق کینیڈا فضائی آلودگی کے لحاظ سے دنیا کے صاف ترین ممالک میں شامل ہے تاہم اس کے باوجود یہاں ہر سال کم وبیش آٹھ ہزار افراد فضائی آلودگی کی وجہ سے موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔

کینیڈا کے ستر لاکھ باشندوں کے اعداد وشمار مردم شماری سے لئے گئے اور ان کی رہائش کے مقامات کو انیس سو اکیاسی سے دو ہزار سولہ کے درمیان فضائی آلودگی کے اعداد و شمار سے جوڑا گیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں