The news is by your side.

Advertisement

ایران نے پڑوسی ممالک کے تیل کی برآمدات کو متاثر کیا تو آبنائے ہرمز بند کردیں گے، امریکا

واشنگٹن : امریکا نے ایران کو دھمکی دی ہے کہ ’اگر ایران نے پڑوسی ممالک کی تیل کی برآمدات کو متاثر کرنے کی کوشش کی تو امریکا آبنائے ہرمز بند کردے گا‘۔

تفصیلات کے مطابق ایرانی صدر حسن روحانی کی جانب سے مشرق وسطیٰ میں تیل کی برآمدات روکنے کے دھمکی آمیز بیان کو مسترد کرتے ہوئے امریکا نے تنبیہ دی ہے اگر ایران نے خطے کے دیگر ممالک کی تیل کی برآمدات بند کرنے کی کوشش کی کو ایران کی آبنائے ہرمز بند کردیں گے۔

امریکی سینٹرل کمانڈ کے ترجمان پیل اربن کا غیر ملکی خبر رساں ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ’مشرق وسطیٰ میں امریکی کے اتحادی ممالک اور امریکا عالمی قوانین کے تحت آزادانہ نقل و حرکت اور تجارت کی آزادی کے حوالے ضمانت دینے کو تیار ہیں۔

خیال رہے کہ ایرانی صدر حسن روحانی نے دورہ سوئٹرزلینڈ کے دوران خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’یورپی ممالک جوہری معاہدے کو برقرار رکھنے کے لیے ایران سے تیل کی تجارت جاری رکھیں اور یورپی کمپنیاں بھی ایران میں کاروبار کرتی رہیں‘۔

حسن روحانی کا کہنا تھا کہ ’اگر عالمی منڈی میں ایران کو تیل کی تجارت سے محروم کرنے کی کوشش کی گئی تو ایران بھی تیل پیدا کرنے والے پڑوسی ممالک کے تیل بردار جہاز روک دے گا‘۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ایران کی سپاہ پاسداران کی القدس بریگیڈ کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی نے بھی خبر دار کیا ہے کہ اگر عالمی منڈی میں ایرانی تیل عدم توازن کا شکار ہوا تو سپاہ پاسداران دوسرے ممالک کے تیل بردار جہازوں کو آبنائے ہرمز میں روکنے کے لیے تیار ہے‘۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں