The news is by your side.

’شہریوں کو پیناڈول کی بجائے پیراسٹامول طلب کرنی چاہیے‘

اسلام آباد: قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی کے اجلاس میں وفاقی سیکریٹری صحت نے شہریوں کو یہ اہم ہدایت کی ہے کہ وہ میڈیکل اسٹورز سے پیناڈول کی بجائے پیراسٹامول طلب کریں۔

تفصیلات کے مطابق آج جمعرات کو افضل ڈھانڈلہ کی زیر صدارت قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی صحت کا اجلاس منعقد ہوا، جس میں سی ای او ڈریپ، پی ایم سی، پی این سی، آئی ایچ آر اے حکام نے شرکت کی اور وفاقی وزیر صحت قادر پٹیل کی عدم شرکت پر اظہار برہمی کیا گیا۔

قائمہ کمیٹی صحت نے ملک میں پیناڈول کی قلت پر خصوصی اجلاس بلانے کا فیصلہ کیا، اجلاس کو بتایا گیا کہ سیلاب زدہ علاقوں میں لوگ ادویات کے لیے تڑپ رہے ہیں۔

وفاقی سیکریٹری صحت ڈاکٹر شازیہ ثوبیہ نے کہا کہ پیراسٹامول سے متعلق آگاہی پھیلانے کی ضرورت ہے، شہریوں کو پیناڈول کی بجائے پیراسٹامول طلب کرنی چاہیے، پیراسٹامول فارمولا، اور پیناڈول مخصوص برانڈ ہے۔

سی ای او ڈریپ ڈاکٹر عاصم رؤف نے کہا کہ دوا ساز کمپنیاں پیراسٹامول گولی کی قیمت میں اضافہ چاہتی ہیں، وہ موجودہ قیمت پر اس کی پروڈکشن پر تیار نہیں، ان کا تقاضا ہے قیمت میں 80 پیسے اضافہ کیا جائے۔ ڈاکٹر عاصم نے کہا پیراسٹامول کا 85 فی صد خام مال مقامی سطح پر، جب کہ 15 فی صد باہر سے آ رہا ہے، اور فارمیسیوں پر پیراسٹامول من پسند قیمت پر فروخت ہو رہی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں