مراکش میں دو یورپی خاتون سیاح قتل، مقدمہ درج Morocco
The news is by your side.

Advertisement

مراکش میں دو یورپی خاتون سیاح قتل، ملزم گرفتار

رباط : مراکش کے پہاڑی سلسلے پر دو یورپی خاتون سیاح مردہ حالت میں پائی گئی ہیں جنہیں چھری سے ذبح کرکے قتل کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق شمالی افریقہ کے بلند ترین چوٹی توببقال کے قریب مراکش کے پہاڑی سلسلے پر واقع سیاحتی علاقے املیل سے دو یورپی خواتین کی لاش برآمد ہوئی ہے۔

مراکشی وزیر داخلہ کا کہنا ہے کہ دونوں خواتین سیاح کو نامعلوم افراد نے تیز دھار آلے سے گردن کاٹ کر قتل کیا، تاحال قتل کی وجوہات سامنے نہیں آسکیں ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ نامعلوم وجوہات ک بناء پر قتل ہونے والی ایک خاتون کا تعلق ڈنمارک اور دوسری مقتولہ کا تعلق ناروے سے ہے۔

مراکشی حکام کا کہنا ہے کہ پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے یورپی خواتین کے قتل کے شبے میں ملزم کو مراکش شہر سے گرفتار کرلیا ہے۔

مراکشی حکام کا کہنا ہے کہ ملزم سیکیورٹی اداروں کی حراست میں اور اس واقعے کی تفتیش جاری ہے جبکہ پولیس قتل میں ملوث دیگر ملزمان کی گرفتاری کےلیے چھاپے مار رہی ہے۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا ہے کہ مقتول خاتون نے مراکش کے سیاحتی مقام املیل سے 10 کلومیٹر کے فاصلے پر خیمہ لگایا تھا اور دونوں خواتین کی لاش خیمے کے اندر سے برآمد ہوئی تھی۔

برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق دونوں ممالک کے حکام نے قتل کی تصدیق کردی ہے۔

ایک خاتون کی شناخت 28 سالہ میرن یولینڈ کے نام ہوئی ہے جس کا تعلق ناروے سے ہے جبکہ ڈچ حکام نے دوسری خاتون کے نام کی تصدیق نہیں کی ہے۔

میرن یولینڈ

میرن یولینڈ کی والدہ کا کہنا ہے کہ دونوں لڑکیاں ناروے کی یونیورسٹی آف ساؤتھ ایسٹرن میں ایک ساتھ تعلیم حاصل کررہی تھیں اور 9 دسمبر کو کرسمس کی چھٹیاں گزرنے سیاحت پر گئی تھیں۔

عرب میڈیا کا کہنا تھا کہ وزارت داخلہ نے قتل اور مقدمے سے متعلق مزید تفصیلات سے آگاہ نہیں کیا۔

خیال رہے کہ شمالی افریقہ میں واقع ملک مراکش کی معیشت میں زراعت کے دوسرا بڑا کرادر سیاحت ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں