The news is by your side.

Advertisement

بجٹ میں ٹیکس کا بوجھ کم کرنےکی کوشش کریں گے، وزیرخزانہ

اسلام آباد: وفاقی مشیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ کا کہنا ہے کہ حالات کی بہتری کے لیے کئی اہم فیصلے کیے ہیں، بجٹ عوامی مشکلات دور کرنے کے لیے بنایا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم کے مشیر برائے خزانہ عبدالحفیظ شیخ کا کہناہے کہ غیرملکی ذخائر10ملین ڈالرسےبھی کم ہوچکےہیں، ورلڈبینک اورایشین بینک ہمیں دوسےتین ارب قرض دیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ آئی ایم ایف پروگرام میں جانامشکل فیصلےکی ایک کڑی ہے،معیشت کی بہتری کیلئےاقدامات کیے جارہے ہیں، جس کے لیے ہم روزگارکےمواقع اورآمدن میں اضافےکی کوشش کررہےہیں۔ان کا کہنا تھا کہ شرح نموکم اورمہنگائی بڑھ رہی ہے۔

مشیر خزانہ نے یہ بھی کہا کہ بجلی مہنگی ہوئی ہے لیکن300یونٹ سےکم بجلی استعمال کرنےوالوں پرکوئی اثرنہیں پڑےگا جبکہ گیس کی قیمتیں بڑھنےسے40فیصدصارفین پراثرنہیں پڑےگا۔ ان کا کہنا تھا کہ جب حکومت آئی تھی توقرض31000ارب روپےتھا ۔

حفیظ شیخ کا کہنا تھا کہ تاجروں سےبجٹ سےمتعلق گفتگوہوئی ہے،قومی ترقیاتی پروگرام 800ارب روپےکیاجارہاہے۔ ہماری کوشش ہے کہ کمزورطبقےکوساتھ لےکرچلاجائے۔

ان کا کہنا تھا کہ لوگ جانتےہیں کہ حکومت کی نیت کیاہے،سرمایہ کاری بڑھانےکیلئےنئےپروگرام لائےجارہےہیں اوراخراجات کم کرکےخسارہ کم کرنےکی کوشش کررہےہیں۔

انہوں نے کہا کہ ڈاکٹررضاباقردنیاکےمانےجانےآدمی ہیں جبکہ شبرزیدی کوچیئرمین ایف بی آربنایاگیاہے۔ اس حکومت نے کمزور طبقےکوساتھ لے کر چلنے کے لیے احساس پروگرام شروع کیاگیا۔بجٹ عوامی مشکلات کودور کرنے کے لیے بنایا گیا ہے،اخراجات کم کریں گے اور ٹیکس کا بوجھ کم کرنےکی کوشش کریں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں